استعفوں کے باوجود سینیٹ الیکشن نہیں رک سکتے، قانونی ماہرین 

  استعفوں کے باوجود سینیٹ الیکشن نہیں رک سکتے، قانونی ماہرین 

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)سینیٹ الیکشن سے متعلق وزیراعظم عمران خان نے اپنی قانونی ٹیم سے مشاورت کی ہے۔ذرائع کے مطابق قانونی ماہرین نے وزیراعظم کو رائے دی کہ اپوزیشن کے صوبائی اسمبلیوں سے مستعفی ہونیکی صورت میں بھی سینیٹ الیکشن نہیں رک سکتے، اگرکوئی رکن ووٹ ڈالنے نہ جائے یا مستعفی ہوجائے توالیکشن کیسے رک سکتاہے؟ قا نونی ماہرین نے یہ بھی کہا کہ اپوزیشن کے استعفوں پرصوبائی اسمبلیوں سے تمام نشستیں حکومتی امیدوارجیت جائیں گے، اگرسندھ اسمبلی توڑدی جائے توصرف سندھ صوبے میں سینیٹ الیکشن نہیں ہوگا، سندھ کے سوا باقی تینوں صوبوں میں سینٹ الیکشن ہوجائیگا،سندھ اسمبلی توڑے کی صورت میں بھی 3 صوبوں کا الیکٹورل کالج برقراررہیگا۔قانونی ماہرین نے مشورہ دیا کہ حکومت سینیٹ انتخابات میں زیادہ امیدواروں کیکاغذات نامزدگی جمع کرائے۔

قانونی ماہرین

مزید :

صفحہ اول -