سینیٹ میں اکثریت ہمارا حق، اپوزیشن شوف آف ہینڈ کے ذکر سے ہی بلبلا اٹھی: فردوس عاشق

    سینیٹ میں اکثریت ہمارا حق، اپوزیشن شوف آف ہینڈ کے ذکر سے ہی بلبلا اٹھی: ...

  

 لاہور ( جنرل رپورٹر)معاون خصوصی وزیراعلی ڈاکٹر فردوش عاشق اعوان نے کہا ہے کہ راجکماری وزیراعظم عمران خان کے بغض اور عناد میں عوام کو گمراہ کررہی ہے جس کیلئے شاہی محل میں جھوٹ کے انبار لگا دیئے ہیں،راجکماری کو ایسی جمہوریت پسند نہیں جس میں وہ حکومت میں نہ ہوں،یہ وہی راجکماری ہے جو کہتی تھی کہ میری پاکستان سے باہر تو کیا پاکستان میں بھی کوئی جائیداد نہیں، عمران خان نے 22 سالہ جمہوری جدوجہد کے ذریعے عوام کو گلے سڑے نظام اور شاہی خاندان کی نسل درنسل غلامی سے نجات دلائی۔گزشتہ روز ڈی جی پی آر آفس میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے فردوس عاشق اعو ان نے کہا کہ حکومت اور اپوزیشن میں فرق یہ ہے کہ ان کا لیڈر عدالت کا سرٹیفائیڈ چور اور ڈاکو ہے جبکہ ہمارے وزیراعظم کو عدالت نے ہی صادق اور امین قرار دیا ہے۔انہوں نے کہا کہ سینٹ میں واضح اکثریت پی ٹی آئی کا حق ہے۔اپوزیشن شو آف ہینڈ کے ذکر سے ہی بلبلا اٹھی ہے کیونکہ نواز شریف چھانگا مانگا کی سیاست اور چمک کے داؤ پیج سے ہارس ٹریڈنگ کرنے اور ادارووں کو یرغمال بنانے میں اپنا ثانی نہیں رکھتے۔ یہ اعزاز راجکماری کے چچا کا ہی ہے کہ ان کی جج کو اپنی مرضی کا فیصلہ حاصل کرنے کے لئے کئے گئے فون کی ٹیپ مارکیٹ میں ہر جگہ عام ہے۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت اداروں کو آئین و قانون کے تابع بنانے کے عزم پر قائم ہے ہم آئین سے باہر کوئی قدم نہیں رکھیں گے اور سپریم کورٹ سے شو آف ہینڈ کے ذریعے سینٹ کے الیکشن کے انعقاد کے حوالے سے رہنمائی طلب کی گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اپوزیشن کے استعفوں والا کارڈ کھیلنے کے ساتھ ہی ہم بھی ان کو ایک سرپرائز دیں گے جس سے پتہ چلے گا کہ ان کے کتنے ساتھی ان کا ساتھ چھوڑ گئے ہیں۔ اپوزیشن کا گڈا گڈی کاجو کھیل کھیل رہی ہے اس میں پی پی پی (ن) لیگ کے بیانئے سے متفق نظر نہیں آرہی۔ابھی اپوزیشن استعفوں کے معاملے پر تاریخ پر تاریخ دے کر پینترے بدل رہی ہے۔ پیپلزپارٹی سب کچھ قربان کرسکتی ہے لیکن اپنا مال پانی نہیں چھوڑے گی اور اس کے مال پانی کی کان سندھ حکومت میں چھپی ہوئی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ راوی اربن ڈویلپمنٹ اتھارٹی کو اراضی کے حصول کے لئے پانچ ارب روپے کا قرض دینے اور ماسٹر پلان میں آنے والی سرکاری اراضی دینے کی منظوری دے دی گئی ہے۔ پنجاب کابینہ نے خصوصی افراد کے لئے تین فیصد خصوصی کوٹہ کے تحت دی جانے والی ملازمتوں میں بالائی عمر کی حد میں رعایت دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ کابینہ نے بڑے ہسپتالوں میں چارجز وصول کرنے کی تجویز بھی مسترد کردی ہے۔ پی ٹی آئی حکومت کے منشور کے مطابق پنجاب کابینہ نے تاریخی فیصلہ کرتے ہوئے صوبے میں کلاس اول تا پنجم تک کا نصاب پرائیویٹ و سرکاری سکولوں اور مدرسوں میں یکساں طور پر نافذ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔انہوں نے کہا ہے کہ گجرپورہ زیادتی کیس میں ریپ آرڈیننس انصاف کی جلد فراہمی میں معاون ثابت ہوگا۔حوا کی بیٹیوں کی حرمت پامال کرنے والوں کو نشان عبرت بنایا جائے گا۔ آرڈیننس کے تحت جنسی درندوں کو سزائے موت اور عمر قید کی سزا دی جائے گی جبکہ جرمانے اور کیمیکل کیسٹریشن جیسی سزائیں بھی دی جائیں گی۔ 

فردوس عاشق

مزید :

صفحہ اول -