اس وقت کورونا وباء پوری دنیا میں پھیلی ہوئی ہے،ریاض محسود

 اس وقت کورونا وباء پوری دنیا میں پھیلی ہوئی ہے،ریاض محسود

  

پشاور(سٹاف رپورٹر)کمشنر ہزارہ ڈویژن ریاض خان محسودنے کہا ہے کہ اس وقت کورونا وباء پوری دنیا میں پھیلی ہوئی اس لئے میڈیا کو اس کی روک تھام کے لیے اپنا بھرپور کردار ادا کرتے ہوئے عوام میں اس سے بچاؤ کے احتیاطی تدابیر، شعور و آگاہی پر زیادہ سے زیادہ کام کرنا چاہیے۔ان خیالات کا اظہار اور انہوں نے جمعرات کے روز کمشنر ہاؤس میں آل ٹریڈرز فیڈریشن علی اصغر گروپ کے نومنتخب عہدیداروں سے حلف لینے کے موقع پر منعقدہ تقریب میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر آل ٹریڈرز کے منتخب عہدیدارو ں سے حلف لیا۔انہوں نے کہا کہ کورونا وباء سے بچا ؤ کے لئے صرف اور صرف تین بنیادی احتیا طی تدا بیر پر سختی سے عمل کرنے کی ضرورت ہے۔ ماسک پہننا، بار بار ہاتھ دھونا اور سماجی فاصلہ رکھنا جس کے لئے کسی کے مدد کی ضرورت نہیں ہے۔ انہوں نے عوام سے اپیل ہے کہ ان احتیا طی تدابیر پر عمل کرتے ہوئے اپنے آپ اور اپنے پیاروں کو کورونا وباء سے بچائیں۔ کمشنر ہزارہ نے نو منتخب آل ٹریڈرز فیڈریشن کو خوش آمدید اورمبارکباد پیش کرتے ہوئے کہا کہ انہیں امید ہے کہ وہ اپنے تاجر برادری کی فلا ح و ترقی کے لئے بھر پور کام کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ میں تاجر برادری کے تمام گروپوں کو خوش آمدید کہتا ہوں جو بھی گرو پ ہو ہما رے لئے قابل قدر ہے اور کمشنر آفس ان کے لئے حا ضر ہے۔۔ انہوں نے کہا کہ میں ہزارہ ڈویژن کی تاجر برادری سے بہت خوش ہوں کیونکہ چینی بحرا ن اور سستا انصاف بازاروں کے انعقاد کی کامیابی میں انہوں نے حکومت کا بھرپور ساتھ دیا اور پورے صوبے میں سب سے زیادہ ہمارے سستا انصاف بازار کا میاب ہوئے میں یہ ساری کامیابی تاجر برادری کے نام کرتا ہوں۔ انہوں نے کہا کہ ہزارہ ڈویژن کے عوام باشعور اور پڑھے لکھے ہیں کیونکہ بازاروں اور پبلک ٹرانسپورٹ میں جس طرح کورونا سے بچاؤ کی احتیاطی تدابیر پر عمل کیا جا رہا ہے مجھے دیکھ کر بہت خوشی ہوئی۔ انہوں نے کہا کہ اس وقت تک ہزارہ ڈویژن میں 90ہزار سے زیادہ کو رونا ٹیسٹ کئے جا چکے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کا زیادہ سے زیادہ کورونا ٹیسٹ کرنے کا مقصد یہی ہے کہ کونسے ایریا میں کورونا وباء کی شرح زیادہ ہے تاکہ اسے کنٹرول کیا جاسکے۔انہو ں نے کہا کہ ہمارے ہاں اس وقت کوئی مسئلہ نہیں ہے کورونا مریضوں کے لیے قرنطینہ سنٹر آئسو لیشن وارڈز اور دیگر تمام میڈیکل سہولیات موجود ہیں اس لیے ہمیں ان کو مزید بڑھنے سے روکنے کے لیے عوام اور حکومت میں مل کر کام کرنا ہے اور حکو مت کی طر ف سے واضع کردہ حفاظتی تدابیر پر عمل کرتے ہوئے اپنے آپ اور دوسروں کو بھی بچانا ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -