ہسپتال کی نجکاری ملازمین سمیت غریبوں کے ساتھ بھی ظلم ،ڈاکٹر اسفند یار

ہسپتال کی نجکاری ملازمین سمیت غریبوں کے ساتھ بھی ظلم ،ڈاکٹر اسفند یار

  

 اسلام آباد (این این آئی)ایم ٹی آئی ایکٹ کے خلاف پمز ملازمین کا احتجاج 18 ویں روز داخل ہوگیا۔فیڈرل گرینڈ ہیلتھ الائنس کے چیئرمین ڈاکٹر اسفندیار نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ گزشتہ روز وزیراعظم نے پمز کے مسئلے پر بات کی، افسوس اس بات کا ہوا کہ ہمیں احتجاجی مظاہرین کہا گیا۔ڈاکٹر اسفندیار نے کہاکہ ہم نے اپنی زندگیاں لوگوں کی جانوں کو بچانے میں وقف کر دی،ہمیں احتجاج پر لانے والی حکومت ہے۔ڈاکٹر اسفندیار نے کہاکہ ایسے قانون کو لاگو کیا جارہا ہے جس سے پورا ہسپتال پرائیویٹ ہو جائے گا، وزیراعظم کو تمام تر معاملات سے آگاہ نہیں کیا گیا۔ڈاکٹر اسفندیار نے کہاکہ وزیراعظم کو شاید نہیں پتہ کہ یہاں ٹھیکداری نظام متعارف کروایا جا رہا۔ ڈاکٹر اسفند یار نے کہاکہ حکومت اگر ریفارمز لانا چاہتی ہے تو ہم ساتھ ہیں، اڑھائی سال سے حکومت نے کیا کیا ہے جو آج بہتری ہو گی۔ انہوں نے کہاکہ بورڈ آف گورننس کے تحت کیسے ہسپتال میں بہتری آئے گی، ان لوگوں کو بورڈ کا ممبر بنایا گیا جو سیاسی ورکر ہیں، میڈیکل ٹیچنگ انسٹیٹیوٹ کے تحت کوئی بھی ہسپتال کا ملازم نہیں رہے گا، ہم تمام ہسپتال کے ملازمین کہاں جائیں گے، ہسپتال کی نجکاری ملازمین سمیت غریبوں کے ساتھ بھی ظلم ہے۔

ڈاکٹر اسفند یار 

مزید :

صفحہ آخر -