قیمتی سرکاری زمین پر قبضہ ، اینٹی کرپشن پنجاب نے مسلم لیگ ن کے اہم رہنما کو گرفتار کر لیا 

قیمتی سرکاری زمین پر قبضہ ، اینٹی کرپشن پنجاب نے مسلم لیگ ن کے اہم رہنما کو ...
قیمتی سرکاری زمین پر قبضہ ، اینٹی کرپشن پنجاب نے مسلم لیگ ن کے اہم رہنما کو گرفتار کر لیا 

  

گوجرانوالہ(ڈیلی پاکستان آن لائن)محکمہ اینٹی کرپشن پنجاب نےمسلم لیگ (ن) کے سابق رکن قومی اسمبلی مدثر قیوم ناہرا کو گرفتار کر لیا ہے، ان کی گرفتاری سرکاری زمین پر قبضہ کے مقدمے میں عمل میں لائی گئی ہے۔

نجی ٹی وی چینل "دنیا نیوز" کے مطابق مسلم لیگ ن کے سابق ایم این اے  مدثر قیوم ناہرا کیخلاف نواحی گاؤں مٹو بھانکے میں سرکاری اراضی پر قبضہ کرنے کے الزام پر مقدمہ درج کیا گیا تھا۔ ان کے بھائی اور نون لیگی رکن قومی اسمبلی مظہر قیوم ناہرا نے اراضی کے حوالے سے چند روز قبل اے سی نوشہرہ ورکاں کو سنگین نتائج کی دھمکیاں بھی دی تھیں،ناہرہ برادران عرصہ دراز سے سرکاری اراضی پر قابض تھے۔مدثر قیوم ناہرا، ان کے بھائی اظہر قیوم اور والد سلطان احمد کیخلاف ڈی سی گوجرانوالہ نے ریفرنس بھیجا تھا جس میں کہا گیا تھا کہ ملزمان نے 267 کنال سے زائد سرکاری زمین پر قبضہ کر رکھا ہے، ان کیخلاف فوری کارروائی عمل میں لائی جائے۔جس کے بعد سرکل آفیسر اینٹی کرپشن مرزا زمان نے  ڈی ایس پی کامونکی،ایس ایچ او تتلے عالی،ایس ایچ او نوشہرہ ورکاں ،ایلیٹ فورس اور پولیس کی بھاری نفری کے ہمراہ ناہرا ہاؤس پر ریڈ کیا،اس موقع پر اینٹی کرپشن ٹیم کی نون لیگی رہنما کے ساتھ تلخ کلامی بھی ہوئی تاہم اینٹی کرپشن ٹیم حاجی مدثر قیوم ناہرا کو گرفتار کرکے گوجرانوالہ روانہ ہو گئی ۔اینٹی کرپشن حکام کا کہنا ہے کہ سرکاری زمین پر قبضہ میں ملوث باقی ملزمان کی گرفتاری کے لئے چھاپے مارے جا رہے ہیں،سرکاری املاک کی حفاظت متعلقہ محکموں کی ذمہ داری ہے۔

مزید :

قومی -