یوایف سی فائٹر خبیب نورما گو میدوف کو ایسا اعزاز مل گیا کہ دنیا بھر کے کھلاڑی ان پر رشک کریں گے 

یوایف سی فائٹر خبیب نورما گو میدوف کو ایسا اعزاز مل گیا کہ دنیا بھر کے کھلاڑی ...
یوایف سی فائٹر خبیب نورما گو میدوف کو ایسا اعزاز مل گیا کہ دنیا بھر کے کھلاڑی ان پر رشک کریں گے 
سورس: twitter

  

لندن(ڈیلی پاکستان آن لائن )برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی نے روسی یو ایف سی فائٹراور لائٹ ویٹ ورلڈ چیمپئن خبیب نور ماگومیدوف کو 'ورلڈ سپورٹس سٹار آف دی ایئر' قرار دیا ہے۔

بی بی سی کے مطابق 32 سالہ کھلاڑی نے 29 فتوحات کے ساتھ اپنے لیے پروفیشنل ریکارڈ قائم کیا اور عبوری چیمپئن امریکا کے جسٹن گیچے کو رواں سال 24 اکتوبر کو  دبئی میں ہونے والے ایک یادگار میچ میں دوسرے راؤنڈ میں ہی شکست دے دی تھی۔ خبیب نورماگومیدوف نے 2008 میں مکسڈ مارشل آرٹس میں ڈیبیو کیا تھا اور کیرئیر کے آغاز سے ریٹائرمنٹ تک خبیب نے اپنے کیریئر میں 29 مقابلے کیے اور تمام میں ناقابل شکست رہتے ہوئے فتح حاصل کی۔رواں سال دبئی میں ہونے ہونے والا آخری میچ خبیب کے لیے کافی جذباتی مقابلہ تھا کیونکہ اس سے چند ماہ قبل اُنہیں اپنےوالد جو ان کےکوچ بھی تھے کہ کورونا کے باعث انتقال کرجانے کا صدمہ اٹھانا پڑا تھا ، یہی وجہ تھی کہ انہوں نے اسے اپنا آخری مقابلہ قرار دے کر ریٹائرمنٹ کا اعلان کر دیا تھا ۔لائٹ ویٹ ورلڈ چیمپئن خبیب نورماگو میدوف نے دبئی میں ہونے والی آخری فائٹ میں امریکہ کے جسٹن گیچے کو مات دی اور دوسرے راؤنڈ میں ہی انہیں بے بس کردیا۔اپنے آخری مقابلے کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے خبیب نور ماگومیدوف کا نم آنکھوں کے ساتھ  کہنا تھا  کہ والد کی موت کے بعد مجھے میچ کھیلنے کے لیے اکیلے آنا پڑا جو بہت تکلیف دہ ہے ،اس لیے میں نے پہلے ہی اپنی والدہ سے اس میچ کے بعد ریٹائرمنٹ کا اعلان کرنے کی اجازت لے لی تھی۔

مزید :

کھیل -