سکولوں کی سیکیورٹی ہائی الرٹ کرنے کے احکامات

سکولوں کی سیکیورٹی ہائی الرٹ کرنے کے احکامات

  



لاہور(ذکا ء للہ ملک)حکومت پنجاب نے صوبائی دارالحکومت کے تمام تعلیمی اداروں کی سیکیورٹی انتظامات کااز سر نو جائزہ لینے کے لئے محکمہ ایجوکیشن کو احکامات جاری کر دیے۔نجی و سرکاری سکولوں میں سیکیورٹی ہائی الرٹ کرنے ،سیکیورٹی اقدامات کی دوبارہ جانچ پڑتال اور ناقص حفاظتی اقدامات کے حامل تعلیمی اداروں کے خلاف سخت کارروائی کرنے کی ہدایات کی گئی ہیں جبکہ غفلت کے مرتکب ایجوکیشن افسر کے خلاف محکمانہ کارروائی بھی کی جائے گی۔تفصیلات کے مطابق محکمہ تعلیم نے گزشتہ روز لاہور پولیس لائن کے قریب ہونے والے دہشتگردی کے افسوس ناک واقعے کے بعد شہر لاہور کے حساس علاقوں میں قائم تمام سکولوں میں سیکیورٹی کے فول پروف انتظامات کا از سر نو جائزہ لینے کا فیصلہ کیا ہے۔ محکمہ ایجوکیشن نے لاہور کے 9 ٹاؤنوں کے ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسرز،ڈپٹی ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسرز کو اپنے اپنے ٹاؤن میں موجود تمام نجی و سرکاری سکولوں میں حکومت کی طرف سے دیا گیا سیکیورٹی پلان جن میں خار دار تاریں،سی سی ٹی وی کیمرے،سکولوں کی بیرونی دیواروں کی اونچائی،سیکیورٹی گارڈز کی تعیناتی سمیت سیکیورٹی کے تمام لوازمات کی روازنہ کی بنیاد پر مانیٹرنگ و انسپکشن کرنے کی ہدایات جاری کر دی ہیں۔اطلاعات کے مطابق لاہور میں بیشتر ایسے نجی و سرکاری سکول ہیں جہاں سیکیورٹی کے غیر تسلی بخش انتظامات ہیں ۔اس حوالے سے محکمہ ایجوکیشن نے حکومت پنجاب کی ہدایت پر تمام سکولوں میں سیکیورٹی انتظامات کو دوبارہ پرکھنے کے لئے محکمہ تعلیم کے افسران کی ڈیوٹیاں لگا دی ہیں۔زرائع کے مطابق رواں ماہ سے شروع ہونے والے پرائمری و مڈل کے سالانہ امتحانات کے حوالے سے تمام سکولوں میں سیکیورٹی کے انتظامات کو ہر حال میں یقینی بنانے کا فیصلہ کیا گیا ہے جبکہ کینٹ،ڈیفنس،گلبرک،جوہر ٹاؤن،علامہ اقبال ٹاؤن،سمیت حساس علاقوں میں قائم تمام سکولوں کے حفاظتی انتظامات کو حکومتی سیکیورٹی پلان کے تحت جانچا جائے گا۔رابطہ کرنے پر ایگزیکٹیو ڈسٹرکٹ ایجوکیشن پرویز اختر خان نے کہا کہ لاہور کے تمام سرکاری سکولوں میں سیکیورٹی انتظامات تسلی بخش ہیں جبکہ حفاظتی اقدامات میں کمی کو پورا کرنے کیلئے سکول سربراہان کو احکامات دیے جا چکے ہیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...