کسب بینک کا معاملہ فوری طور پر حل کیا جائے، آپما

کسب بینک کا معاملہ فوری طور پر حل کیا جائے، آپما

  



لاہو(کامرس ڈیسک) آل پاکستان پیپر مرچنٹس ایسوسی ایشن (آپما) نے وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار اور گورنر سٹیٹ بینک پر زور دیا ہے کہ وہ کسب بینک کا معاملہ فوری طور پر حل کرے کیونکہ اکاؤنٹ منجمد ہونے سے کھاتہ داروں کو شدید مالی مشکلات کا سامنا ہے۔ آل پاکستان پیپر مرچنٹس ایسوسی ایشن کے رہنماؤں خواجہ ندیم سعید وائیں، خامس سعید بٹ اور محمد اجمل نے کہا کہ سٹیٹ بینک کی جانب سے کسب بینک کے معاملے پر بروقت توجہ نہ دینے اور اکاؤنٹس اچانک منجمد کردینے سے کھاتہ داروں کا بھاری سرمایہ پھنس گیا ہے جس کی وجہ سے انہیں کاروبار کرنے اور دیگر ضروریات کے لیے رقم میسر نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ سٹیٹ بینک کی یہ دلیل بے بنیاد ہے کہ کسب بینک کے کھاتہ داروں کے مفاد کے پیش نظر کھاتے منجمد کیے گئے ہیں۔ انہوں نے سٹیٹ بینک پر مزید زور دیا کہ وہ دیگر بینکوں کے معاملات کا بھی جائزہ لے وگرنہ کسب بینک کی طرح مزید بینکوں میں بھی کھاتہ داروں کا سرمایہ پھنس جانے کا احتمال ہے۔ خواجہ ندیم سعید وائیں نے کہا کہ بینکوں کے معاملات کا جائزہ لینا اور کھاتہ داروں کے مفاد کا تحفظ کرنا سٹیٹ بینک کی ذمہ داری ہے۔ انہوں نے وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار اور گورنر سیٹ بینک پر زور دیا کہ وہ کسب بینک کے کھاتہ داروں کا سرمایہ فوری طور پر واپس کرنے کے احکامات صادر کریں کیونکہ بینک انتظامیہ کی نااہلی کی سزا کھاتہ داروں کو دینا کسی طرح بھی درست نہیں۔

مزید : کامرس


loading...