تحریک انصاف کا نواز لیگ کو ’ٹکر‘ دینے کافیصلہ، چوہدری سرور کو اہم ذمہ داریاں مل گئیں

تحریک انصاف کا نواز لیگ کو ’ٹکر‘ دینے کافیصلہ، چوہدری سرور کو اہم ذمہ ...
تحریک انصاف کا نواز لیگ کو ’ٹکر‘ دینے کافیصلہ، چوہدری سرور کو اہم ذمہ داریاں مل گئیں

  



لاہور (جاوید اقبال) پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے پارٹی کے اند ر دھڑے بندیوں اور رہنمائوں میں اختلافات کا نوٹس لے لیاہے اوراس کےلئے سنٹرل کور کمیٹی کی منظوری سے سابق گورنر پنجاب چوہدری سرور کو ثالث مقرر کر دیا ہے۔ چوہدری محمد سرور کو بھی یہ ٹاسک دیا گیا ہے کہ ٹائون سے مرکز تک پارٹی کی تمام تنظیموں اور ونگز کے رہنمائوں سے ملاقاتیں کریں اور ان کے اندر دھڑے بندیوں اور گروپ بندیوں کو افہام و تفہیم سے ختم کرانے میں اپنا کردار ادا کریں۔ دریں اثناءچوہدری سرور کو لاہور میں چیئرمین سیکرٹریٹ فوری طور پر قائم کرنے کی ذمہ داری بھی سونپی گئی ہے جس کےلئے ایک ماہ کے اندر لاہور میں گلبرگ کے اند ر کسی بھی مقام پر چیئرمین سیکرٹریٹ قائم کیا جائے گا ،جہاں وہ نئی ذمہ داریاں نبھانے کےلئے اپنا دفتر بھی قائم کریں گے۔

اس سیکرٹریٹ میں پارٹی کے چیئرمین عمران خان ،وائس چیئرمین شاہ محمود قریشی اور سیکرٹری جنرل جہانگیر ترین کے دفاتر بھی قائم کئے جائیں گے۔اس سیکرٹریٹ میں عمران خان تین دن قیام کریں گے اور پارٹی رہنمائوں اور کارکنوں سے ملاقاتیں کریں گے جبکہ باقی دنوں میں شاہ محمود قریشی،جہانگیر ترین اور چوہدری سرور موجود ہوں گے۔یہ فیصلے سنٹرل کور کمیٹی کے اجلاس میں کئے گئے۔ ذرائع نے بتایا کہ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ مسلم لیگ (ن)کے قلعہ کہلوانے والے شہر لاہور میں پی ٹی آئی کو انتہائی فعال بنایا جائے گاجس کےلئے شہر میں چیئرمین سیکرٹری قائم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔کور کمیٹی کی منظوری کے بعد چیئرمین سیکرٹریٹ کے قیام کی ذمہ داری چوہدری سرور کو دی گئی ہے۔کمیٹی کے اجلاس میں یہ بھی فیصلہ کیا گیا ہے کہ پارٹی کے اندر رہنمائوں میں دھڑے بندیاں ختم کرائی جائیںگی جس کا ٹاسک بھی چوہدری محمد سرور کو دیا گیا ہے۔ ذرائع نے بتایا کہ لاہور میں چیئرمین سیکرٹریٹ کا قیام چوہدری محمد سرور کے مطالبے پر عمل میں لایا جا رہا ہے ۔اجلاس میں چوہدری محمد سرور نے مطالبہ کیا تھا کہ اگر لاہور میں پارٹی کو منظم کرنا ہے اور مسلم لیگ نواز سے لاہور کا قلعہ واپس لینا ہے تو ہر حال میں چیئرمین سیکرٹریٹ قائم کرنا ہوگاجس پر پارٹی چیئرمین نے منظوری دیتے ہوئے سیکرٹریٹ کی قیام کی ذمہ داری بھی چوہدری محمد سرور کے سپرد کی ہے۔ اجلاس میں لاہور سمیت پنجاب کے تمام اضلاع میں پارٹی رہنمائوں میں گروپ بندیوں پر بھی غور کیا گیا اور ان کو ختم کرانے کی ذمہ داری بھی چوہدری سرورکو دی گئی ہے۔دریں اثناءچوہدری سرور کو سنٹرل کور کمیٹی اور ایگزیکٹو کمیٹی کا ممبر بنانے کی منظوری بھی دی گئی تاہم انہیں پارٹی کی صدارت یا وائس چئیرمین شپ میں سے کوئی ایک عہدہ دینے کا فیصلہ آئندہ اجلاس میں کیا جائے گا۔

مزید : قومی /اہم خبریں


loading...