لاہور ہائی کورٹ :وزیر اعظم کے خلاف غداری کے الزام میں کارروائی کے لئے دائر انٹرا کورٹ اپیل بحال

لاہور ہائی کورٹ :وزیر اعظم کے خلاف غداری کے الزام میں کارروائی کے لئے دائر ...
لاہور ہائی کورٹ :وزیر اعظم کے خلاف غداری کے الزام میں کارروائی کے لئے دائر انٹرا کورٹ اپیل بحال

  



لاہور (نامہ نگار خصوصی) لاہورہائیکورٹ کے جسٹس امین الدین خان اور جسٹس ایم سہیل اقبا ل بھٹی پر مشتمل ڈویژن بنچ نے وزیراعظم میاں محمد نوازشریف کے خلاف آرٹیکل 6کے تحت کارروائی کے لئے دائرانٹراکورٹ اپیل بحال کرتے ہوئے کیس کی سماعت کے لئے 26فروری کی تاریخ مقرر کردی ہے۔

لاہور ہائی کورٹ نے ایف بی آر کو واپڈا سے 6ارب روپے وصول کرنے سے روک دیا۔

سید اقتدارحیدرشاہ کی جانب سے دائریہ انٹراکورٹ اپیل عدم پیروی کی بناءپر خارج کردی گئی تھی جس کی بحالی کے لئے سید اقتدار حیدر شاہ کی جانب سے متفرق درخواست دائر کی گئی جس میں انہوں نے موقف اختیارکیا کہ اسے کیس کی سماعت سے متعلق بروقت اطلاع نہیں ملی تھی جس کے باعث وہ عدالت میں پیش نہ ہوسکے اورعدالت عالیہ نے درخواست کو عدم پیروی کی بناءپر خارج کردیا۔ سید اقتدار حیدر شاہ نے انٹرا کورٹ اپیل میں موقف اختیارکررکھا ہے کہ وزیراعظم میاں محمد نواز شریف کی صاحبزادی کاپاسپورٹ اور شناختی کارڈ میں نام مریم صفدرہے جبکہ میاں محمدنوازشریف نے اپنی بیٹی کا مریم نواز کی حیثیت سے چیئرپرسن یوتھ لون پروگرام تقررکیا۔ وزیراعظم نے قوم سے حقائق چھپا کر اپنے حلف سے انحراف کیا ہے اس لیے ان کے خلاف آرٹیکل 6 کے تحت غداری کا الزام میں کارروائی کی جائے۔

مزید : لاہور /اہم خبریں