شامی فوج کی بمباری، چھوٹا سا بچہ اپنی ٹانگوں سے محروم ہوگیا اورپھر اس واقعہ کے فوراً بعد کیا کہہ رہا ہے؟ ایسی ویڈیو سامنے آگئی کہ پوری دنیا کورُلا دیا

شامی فوج کی بمباری، چھوٹا سا بچہ اپنی ٹانگوں سے محروم ہوگیا اورپھر اس واقعہ ...
شامی فوج کی بمباری، چھوٹا سا بچہ اپنی ٹانگوں سے محروم ہوگیا اورپھر اس واقعہ کے فوراً بعد کیا کہہ رہا ہے؟ ایسی ویڈیو سامنے آگئی کہ پوری دنیا کورُلا دیا

  


دمشق (مانیٹرنگ ڈیسک) شام میں جاری جنگ یوں تو ہر روز نئے المیے کو جنم دے رہی ہے لیکن شاید آپ نے کبھی ایسے ظلم کا تصور بھی نہ کیا ہو گا جو ادلیب شہر میں ایک ننھے بچے اور اس کے مظلوم باپ کو سہنا پڑا۔ گزشتہ روز سامنے آنے والی ایک ویڈیو میں ایک کمسن شامی بچے کو دیکھا جا سکتا ہے، جس کی ٹانگیں گھٹنوں سے کٹ چکی ہیں اور وہ بیچارہ زمین پر تڑپتا ہوا اپنے والد کو پکارتا نظر آتا ہے۔

میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق اس آٹھ سالہ بچے کا نام عبدالباسط طان الستوف ہے، جس کی ٹانگیں شامی فضائیہ کے بیرل بم حملے میں کٹ گئیں۔ ادلیب شہر کے علاقے حبیط میں ہونے والے اس حملے میں ننھے عبدالباسط کی والدہ جاں بحق ہوگئیں جبکہ دو بہن بھائی شدید زخمی ہوگئے۔

’مجھے نیا شوہر چاہیے جو۔۔۔‘ داعش کے مارے جانے والے کارکن کی بیوہ کا انٹرنیٹ پر ’اشتہار‘ ایسی بات لکھ دی کہ یورپی ممالک کے سکیورٹی اداروں میں کھلبلی مچ گئی کیونکہ۔۔۔

ویڈیو میںد یکھا جاسکتاہے کہ بچے کا والد اسے ایک ٹرک کی اوٹ میں لاکر زمین پر لٹاتا ہے، اور اس دوران وہ درد سے بلبلاتے ہوئے پکار رہا ہے ”ابو مجھے اٹھالیجئے، ابو مجھے اٹھالیجئے۔“ مقامی میڈیا کے مطابق اس بچے کو حمہ شہر کے ایک ہسپتال پہنچایاگیا جہاں اس کی حالت تشویشناک بتائی جاتی ہے۔ اس کی زخمی بہن کی حالت بھی نازک ہے، ماں اس حملے میں دنیا سے رخصت ہو چکی ہے اور باپ صدمے سے نیم پاگل ہو چکا ہے۔

مزید : بین الاقوامی


loading...