’ڈونلڈ ٹرمپ ایک لاکھ فوجیوں سے یہ کام کروانے کا سوچ رہا ہے‘ ایسی خبر آگئی کہ پڑھ کر امریکہ میں مقیم بہت سے پاکستانی شدید پریشان ہوجائیں گے کیونکہ۔۔۔

’ڈونلڈ ٹرمپ ایک لاکھ فوجیوں سے یہ کام کروانے کا سوچ رہا ہے‘ ایسی خبر آگئی کہ ...
’ڈونلڈ ٹرمپ ایک لاکھ فوجیوں سے یہ کام کروانے کا سوچ رہا ہے‘ ایسی خبر آگئی کہ پڑھ کر امریکہ میں مقیم بہت سے پاکستانی شدید پریشان ہوجائیں گے کیونکہ۔۔۔

  

واشنگٹن(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکہ میں مقیم تارکین وطن کے لیے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے اقدامات پہلے ہی سوہانِ جاں بنے ہوئے تھے مگر اب ان کی ایک ایسی منصوبہ بندی کا انکشاف ہوا ہے کہ جان کر امریکہ میں رہنے والے غیرملکیوں کے ہوش اڑ جائیں گے۔ ایسوسی ایٹڈ پریس کی رپورٹ کے مطابق ٹرمپ انتظامیہ ملک کی 11ریاستوں میں غیرقانونی طور پر مقیم تارکین وطن کو گرفتار کرنے کے لیے نیشنل گارڈکے 1لاکھ فوجی اہلکار تعینات کرنے کی منصوبہ بندی کر رہی ہے۔ ایسوسی ایٹڈ پریس کو ملنے والی 11صفحات پر مبنی دستاویز کے مطابق یہ اہلکار کیلیفورنیا، ایریزونا، نیو میکسیکو، ٹیکساس، اوریگن، نیواڈا، اوٹاہ، کولوریڈو، اوکلاہوما، آرکینسس اور لوئیسیانا میں تعینات کیے جائیں گے۔

شامی فوج کی بمباری، چھوٹا سا بچہ اپنی ٹانگوں سے محروم ہوگیا اورپھر اس واقعہ کے فوراً بعد کیا کہہ رہا ہے؟ ایسی ویڈیو سامنے آگئی کہ پوری دنیا کورُلا دیا

رپورٹ کے مطابق ان میں سے 4ریاستیں کیلیفورنیا، ایریزونا، نیو میکسیکو اور ٹیکساس ایسی ہیں جن کے بارڈر میکسیکو کے ساتھ ملحق ہیں اور انہی ریاستوں میں زیادہ تر غیرقانونی تارکین وطن مقیم ہیں۔ اگر اس منصوبہ بندی پر عملدرآمد کا اشارہ ملتا ہے تو ان ریاستوں کے گورنر اس کی حتمی منظوری دیں گے کہ فوجی ان کے ماتحت کام کریں گے یا نہیں۔ ایسوسی ایٹڈ پریس نے خبر کی اشاعت سے قبل وائٹ ہاﺅس سے اس پر ردعمل کے لیے رابطہ کیا تاہم انہوں نے انکار کر دیا لیکن خبر کی اشاعت کے بعد وائٹ ہاﺅس کے پریس سیکرٹری سین سپائسر نے اس خبر کو غلط قرار دے دیا۔ ان کا کہنا تھا کہ ”ادارے کو خبر شائع کرنے سے قبل ہم سے رابطہ کرنا چاہیے تھا۔ یہ خبر سو فیصد غلط اور غیرذمہ دارانہ ہے کہ غیرقانونی تارکین وطن کے خلاف فوج کو استعمال کیا جارہا ہے۔“

مزید :

بین الاقوامی -