طلبہ یونینز بحال نہ ہوئیں تو پارلیمنٹ کا گھیراؤں کریں گے ، اکرم رضوی

طلبہ یونینز بحال نہ ہوئیں تو پارلیمنٹ کا گھیراؤں کریں گے ، اکرم رضوی

 لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)نجمن طلباء اسلام کے ملک گیر''بحالی حقوق طلباء ریفرنڈم'' کے نتائج سے حکمرانوں کی نیندیں اڑچکی ہیں ۔ 82فیصد طلباء کا طلباء یونین انتخابات کے مطالبے کے حق میں ووٹ کاسٹ کرنا اس بات کی دلیل ہے کہ طلباء آج بھی طلباء یونین کے باقاعدہ انتخابات کے مطالبے پر قائم ہیں ۔شاہد خاقان عباسی سینیٹ انتخابات سے قبل طلباء یونینز کے انتخابات کا اعلان کریں ۔طلباء یونینزبحال نہ ہوئیں تو پارلیمنٹ کا گھیراؤ کریں گے ۔ حکمرانوں کو طلباء کے آئینی حق سے محروم رکھنے کا فیصلہ ترک کرنا پڑے گا ان خیالات کا اظہار انجمن طلباء اسلام صوبہ پنجاب کے جنرل سیکریڑی محمد اکرم رضوی نے روزنامہ پاکستان کو انٹرویو دیتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا کہ کہ عام انتخابات سے قبل طلباء یونین کے انتخابات اب پوری طلبہ برادری کی آواز بن چکے ہیں ۔ طلباء تنظیموں پر پابندی آئین سے متصادم ہے ۔نااہل حکمران اقتدار کے چھن جانے کے ڈرسے طلباء یونین پر جبری پابندی عائد کیے ہوئے ہیں ۔طلباء یونینز جمہوریت کی نرسریاں ہوتی ہیں جہاں سے ملک وقوم کو محب وطن اور باصلاحیت قیادت میسر آتی ہے ۔ حکمران ہمارے صبر کا پیمانہ لبریز ہونے سے قبل طلباء یونینز کی بحالی کا اعلان کر دیں ۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا ماضی میں جن تعلیمی اداروں میں طلباء یونینز قائم تھیں اور مثبت سرگرمیاں ہوتی تھی مگر بدقسمتی سے آج وہ ہی تعلیمی ادارے منشیات کے اڈے بن چکے ہیں ۔انہوں نے کہا طبقاتی نظام تعلیم نے غریب طالبعلم سے تعلیم کا حق چھین رکھا ہے ۔طلباء کے آئینی حقوق حاصل کرنے کیلئے کسی قربانی سے دریغ نہیں کرینگے،تعلیم کسی بھی دور میں حکمرانوں کی ترجیح نہیں رہی۔انہوں نے کہا کہ پنجاب بھر کی جامعات میں فی الفور وائس چانسلرز تعینات کیے جائیں ۔270ارب روپے کی کرپشن میں ملوث ڈاکٹر عاصم کو ایچ ای سی سندھ کا چےئرمین لگانا شرمناک فعل ہے ۔حکومت نے تعلیمی بجٹ میں اضافہ نہ کرکے تعلیمی دشمنی کا مظاہر ہ کیا ہے ۔اکرم رضوی نے کہاہم نے نوجوانوں کو پاکستان کے استحکام اور سلامتی کیلئے سیسہ پلائی ہوئی دیوار بنادیاہے۔ سعودی عرب میں رسول کریم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی یادگاروں کو مسمار کرنا قابل مذمت ہے اسلامیان عالم سعودی عرب کے ان دل آزار اقدامات پر سراپا احتجاج ہیں۔خطے میں امن کیلئے مسئلہ کشمیرکا حل ضروری ہے ۔ ہم نصاب تعلیم میں تبدیلی اوراسے سیکولر بنانے کی کسی سازش کو کامیاب نہیں ہونے دیں گے، قوموں کے عروج و زوال میں نوجوان نسل نے کلیدی کردار ادا کیا،اس لئے اے ٹی آئی وطن عزیز کے تعلیمی ادروں میں مصروف عمل ہے ۔مزید کہا معاشرے کو امن کا گہوارہ اور پاکستان کو مستحکم بنانے کیلئے نوجوان نسل کی تربیت سب سے اہم ہے قیام پاکستان کے مقاصد حاصل کرنے کیلئے ہم طلباء برادری کو علم و عمل کے اسلحہ سے لیس کر رہے ہیں ۔اکرم رضوی نے کہا انجمن طلبا اسلام طبقاتی نظام تعلیم،سیلف فنانس اسکیم ،تعلیمی اداروں کی نجکاری،میرٹ کی پامالی،تعلیمی ناانصافیاں اور تعلیمی اداروں میں امتیازات بھرتنے کے سخت خلاف ہے

مزید : میٹروپولیٹن 1