کشمیر کونسل ختمہوئی تو اس کے اثاثہ جات آزاد حکومت کو منتقل ہوں گے :راجہ فاروق حیدر

کشمیر کونسل ختمہوئی تو اس کے اثاثہ جات آزاد حکومت کو منتقل ہوں گے :راجہ فاروق ...

مظفرآباد(بیورورپورٹ)وزیراعظم آزاد حکومت ریاست جموں وکشمیر راجہ محمد فاروق حیدر خان نے کہا ہے کہ آزادکشمیر کے وزیر با اختیار ہونے سے پاکستان اور آزادکشمیر کے عوام کے درمیان اٹوٹ رشتے مزید مستحکم ہوں گے اختیار کے ساتھ ساتھ مزید زمہ داری بھی عائد ہوتی ہے ہم پر اعتماد کیا گیا اس کو پورا کرنے میں جان لگا دیں گے مگر پاکستان کے اعتماد کو کبھی ٹھیس نہیں پہنچنے دیں گے آئینی معاملات پر فیصلہ ملازمین نے نہیں قانون سازوں نے کرنا ہے کونسل ختم ہوئی تو کسی ایک شخص کو بھی بے روزگار نہیں ہونے دیں گے وزیراعظم پاکستان کے شکر گزار ہیں جنہوں نے آزادکشمیر کے دیرینہ مسائل کے حل کی جانب عملی اقدامات اٹھائے آزادکشمیر کے عبوری آئین میں ترمیم کے ساتھ ساتھ ریاست کو تربیلا کے برابر واٹر یوزج چارجز دینے کے حوالے سے احکامات صادر فرمائے۔کونسل ختم ہوئی تو اس کے اثاثہ جات آزادحکومت کو منتقل ہوں گے پھر ہمارے پاس کارکردگی نہ دکھانے اور عوام کی خدمت سے چشم پوشی کرنے کا کوئی بہانہ نہیں ہو گا ۔ جنگلات آزادکشمیر کا اثاثہ ہیں ان کے تحفظ اور بڑے پیمانے پر شجر کاری کریں گے اس سال ریکارڈ 28 ہزار ایکڑ رقبے پر شجرکاری کی جائے گی جس کے نتائج اور اس عمل کو یقینی بنانے کے لیے میڈیا اور سول سوسائٹی کو دعوت دیتا ہوں کہ وہ جگہ جگہ جا کرمرحلہ وار مانیٹرنگ کریں کہ زمین پر کیا ہو رہا ہے حکومت اور محکمہ جنگلات ان کو مکمل سپورٹ فراہم کرے گا ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے شجر کاری مہم کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر وزیر جنگلات سردار میر اکبر خان ، وزیر تعمیرات عامہ چوہدری محمد عزیز، وزیر صنعت و حرفت محترمہ نورین عارف، ممبر قانون ساز اسمبلی ڈاکٹر مصطفی بشیر ، سیکرٹری جنگلات سید ظہور الحسن گیلانی، چیف کنزرویٹر فارسٹ اور طاہر مجید نے بھی خطاب کیا۔ وزیراعظم آزادکشمیر نے کہاکہ جنگلات کی زمین پر کسی کو قبضہ نہیں کرنے دوں گا جہاں قبضہ ہے اسے واپس لیا جائے اگر کہیں میری مدد کی ضرورت ہے تو مجھے بتائیں کسی کو ریاستی وسائل پر شب خون نہیں مارنے دیں گے زندگی رہی تو اللہ رب العزت سے دعا ہے کہ جب تک کام کریں گے اس کی مخلوق کے فائدے کے لیے تحریک آزادی کشمیر کے مفاد میں اور مملکت خداداد پاکستان کے حق میں استعمال کریں گے مجھے یقین ہے کہ ختم نبوت ﷺ کے منظور ہونے والے قانون کے صلے میں نہ صرف ہماری شفاعت ہو گی بلکہ ہمارے کام میں بھی آسانیاں پیدا ہوں گی اور ہو رہی ہیں وزیراعظم آزادکشمیر نے کہاکہ محکمہ جنگلات کو دوبارہ پرانی ڈگر پر لانا ہے اس سال بارشیں دیر سے ہونے کے باعث شجر کاری کے عمل میں تاخیر ہوئی اللہ تعالی سبب پیدا کرتاہے اس نے کئی معاملات میں انسان کو خودمختار بنایا اور کئی معاملات صرف اپنے پاس رکھے جنگلات کی بے دریغ کٹائی موسمیاتی تبدیلیوں کا باعث بن رہی ہے۔ اس سال 1400 ملین روپے اس مقصد کے لیے مختص کیے گئے ہیں آزادکشمیر بھر میں لگائے جانے والے ہائیڈل پراجیکٹس خواہ وہ چھوٹے ہوں یا بڑے کے لیے یہ شرط رکھی ہے کہ وہ اپنی مجموعی رقم کا کچھ فیصد شجرکاری اور ماحول دوست اقدامات کے لیے مختص کریں گے اور اس پر ہر صورت عملدرآمد کروایا جائے گا۔ وزیراعظم آزادکشمیر نے کہاکہ محکمہ جنگلات میں بہتری کے لیے مزید محنت کی ضرورت ہے وسائل کا مسئلہ نہیں ہم بھرپور وسائل فراہم کریں گے جنگلات نہ صرف ہمارے ماحول کو صاف ستھرا رکھتے بلکہ ہماری ریاستی خوبصورتی کا لازم ہیں۔ ان کی بے پناہ کٹائی سے ہم نے حیاتیاتی تنوع ، ایکو سسٹم کو بے ہنگم کر دیا ہے دانشمندی سے لکڑی کا استعمال کیا جائے اور محکمہ جنگلات میں بھرتی کے وقت میرٹ کا خصوصی خیال رکھا جائے جنگلات سے سیاحت کے فروغ میں مدد ملے گی عوام میں شعور اجاگر کیا جائے عام آدمی کو جنگلات کی ضرورت و اہمیت کا احساس دلایا جائے لکڑی کی سمگلنگ اور چوری روکنے کے لیے اپنا موثر کردار ادا کیا جائے عوام درختوں پر سرمایہ کاری کرے ان کی نسلیں اس سے مستفید ہوں گے بیمار درختوں کے اوپر سپرے کیا جائے۔ وزیراعظم آزادکشمیر نے مذید کہا کہ کشمیر کونسل کے ملازمین آزادکشمیر کے عوام کے ٹیکسوں سے تنخواہیں لیتے ہیں ان کو مظاہرہ کرتے وقت یہ سوچنا چاہیے ۔

B

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...