تاندلیانوالا شوگر ملز انتظامیہ،بروکرز کی ملی بھگت،جعلی نوٹوں کے ذریعے ادائیگیاں

تاندلیانوالا شوگر ملز انتظامیہ،بروکرز کی ملی بھگت،جعلی نوٹوں کے ذریعے ...

خان پوربگاشیر( نمائندہ پاکستان) تاندلیانوالہ شوگرمل مظفرگڑھ نے کسانوں کا استحصال کرنے کے ساتھ ساتھ دوران ادائیگی کسانوں کو جعلی نوٹ تھمانا شروع کردیئے تفصیلات کے مطابق سینکڑوں کسان حضرات بروکر کے ہاتھوں لوٹنے پر مجبور ہیں جبکہ ملز انتظامیہ اور بروکر مافیا کی ملی بھگت سے کسانوں کو جعلی نوٹ تھمانے لگے۔زاہد جمیل ‘محمد حفیظ ودیگرکسان حضرات نے بتایاکہ ملز انتظامیہ (بقیہ نمبر38صفحہ12پر )

کی بروکر مافیا سے ملی بھگت سے ہمیں پاس بک جاری نہ کی گئی۔ جس کی وجہ سے ہمیں مجبوراً بروکرطالب حسین ولد نبی بخش کے ہاتھوں130روپے من ناجائز کٹوتیوں سمیت گنا فروخت کرنا پڑ ا۔ زاہد جمیل نے بتایا کہ بروکرسے رقم کامطالبہ کیا گیاتو اس نے رقم کیلئے چوہدری ٹریڈرزکے مالک چوہدری اشرف سے رقم لینے تاندلیانوالہ شوگر مل مظفرگڑھ بھیج دیا۔وہاں پہنچ کر جب چوہدری اشرف سے رابطہ کیا گیا تو انہوں نے مل کے اکاونٹ آفس سے رقم لے جانے کو کہا ۔جہا ں پر چیف اکاونٹنٹ یونس کے کمرے میں چیف اکاونٹنٹ یونس کے اسسٹنٹ فیاض نامی شخص نے چوہدری ٹریڈرز کی سٹمپ لگی بائیس لاکھ رقم کی ادائیگی کی ہرکاپی میں ایک ہزار روپے جعلی نوٹ موجود تھے۔میں نے جب پیسے لین دین والوں کو دیے تو انہوں نے جعلی نوٹ مجھے واپس کردئیے ۔ میرے پاس ملز انتظامیہ کی طرف سے چوہدری ٹریڈرز کی سٹمپ والی دی گئی لاکھ لاکھ والی دونوٹوں کی کاپیاں موجود تھی ۔جب ان نوٹوں کی کاپیوں کو حبیب بنک اور نوٹوں والی مشین سے چیک کیا گیا تولاکھ کی کاپی سے ایک نوٹ ہزار والا جعلی نکلا۔جب اس بارے متعلقہ چیف اکاونٹنٹ سے رابطہ کیا گیا تو انہوں کہاکہ تمہارا اس مل میں کوئی لین دین نہیں ہے تم اپنے بروکر سے رابطہ کرویہاں پر روزانہ کروڑوں روپے کا لوگ لین دین کرتے ہیں جس کے ہم ذمہ دار نہیں ہیں۔انہوں نے حکا م بالا سے تاندلیانوالہ شوگرمل مظفرگڑھ کے چیف اکاونٹنٹ یونس ‘اسسٹنٹ اکاونٹنٹ فیاض اور بروکرطالب حسین کے تاندلیانوالہ شوگرمل مظفرگڑھ میں جعلی نوٹ چلانے پر ان کے خلاف سخت کاروائی کا مطالبہ کیا ہے۔اس حوالے سے موقف کیلئے جب چیف اکاؤنٹنٹ یونس سے رابطہ کرنے کیلئے فون کیا گیا تو انہوں نے کال اٹینڈ نہیں کی۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...