مسلم لیگ ن اپنی کوتاہیوں پرنظرثانی کر نے کو تیار ہے،رانا ثناء اللہ

مسلم لیگ ن اپنی کوتاہیوں پرنظرثانی کر نے کو تیار ہے،رانا ثناء اللہ

لاہور(جنرل رپورٹر) صوبائی وزیر قانون رانا ثناء اللہ خان نے کہا ہے (ن) لیگ اپنی کوتاہیوں پرنظرثانی کر نے کو تیار ہے، سیاستدانوں پا ر لیمنٹ اور عدلیہ سب کا احترام ضروری ہے، اگر قانون سازی بھی پارلیمنٹ نے نہیں کرنی تواختیارات کی جنگ کا نتیجہ درست نہیں ہو گا ،کسی اور ادارے کو پارلیمنٹ کا حق سلب کرنے کا حق نہیں،اپوزیشن والے خود کو سپریم کورٹ اور اداروں کے ترجمان بنا کر سامنے آ رہے ہیں، اپوزیشن اپنی حرکات سے توہین عدالت کر رہی ہے کسی کو حق نہیں پہنچتا کہ وہ سپریم کورٹ کا ترجمان بنے،جب فیصلوں میں شعر و شاعری ہو گی تو سیاسی مخالفین فائدہ اٹھائیں گے،پنجاب فوڈ اتھارٹی حفظان صحت کیلئے کھانے پینے کی چیزیں مہیا کر رہی ہے،چوہدری نثار علی خان اور نواز شریف کے درمیان اختلاف رائے ہو سکتا ہے لیکن کوئی اختلاف نہیں،آصف زرداری بہادربچے راؤانوار کو گود میں لینے کی کوشش کر ر ہے ہیں راؤانوار کو بغیر پیش ہوئے ضمانت دی جا رہی ہے اور جے آئی ٹی بہتر کرنے کا کہا جا رہا ہے، ملک میں ایک وزیر اعظم کے گلے میں پھندا ڈال کر لٹکا دیا گیااور دوسرے کو رسہ ڈالا کر نیب کے سامنے گھسیٹا جا رہا ہے۔ میڈیا سے گفتگومیں انکا مزید کہنا تھا آزاد عدالیہ جمہوریت کی بنیادی ضرورت ہے مغزز ججز قانون و آئین کا احترام برقرار رکھیں۔ انہوں نے کہا پنجاب میں سینٹ انتخابات اپوزیشن ایک دوسرے کولعنت طعن کرنے کی بجائے اکٹھے ہوکر مشترکہ لڑے ،سارے لعنتی اکھٹے ہو جائیں تو پنجاب میں ایک سیٹ نکال سکتے ہیں۔ نواز شریف پارٹی کے قانونی و آئینی صدر ہیں،سینٹ کی ٹکٹوں سے متعلق اگر بعد میں کوئی صورتحال پیدا ہوئی تو کوئی فرق نہیں پڑتا۔

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...