کراچی ،ڈاکٹرز کی تادم مرگ بھوک ہڑتال کو چار روز گذر گئے

کراچی ،ڈاکٹرز کی تادم مرگ بھوک ہڑتال کو چار روز گذر گئے

کراچی(اسٹاف رپورٹر)سندھ بھر کے ڈاکٹرز کی جانب سے ترقیاں نہ ملنے اور عدالتی احکامات پر محکمہ صحت کی جانب سے عمل درآمد نہ کئے جانے کے خلاف تادم مرگ بھوک ہڑتال کو چار روز گذر گئے مگر انتظامیہ کے کان پر جوں تک نہ رینگی۔ مسیحاوں کی داد رسی کیلئے نہ کوئی وزیر آیا نہ مشیر سیاسی ومذہبی جماعتیں بھی لاتعلق دکھائی دیتی ہیں۔ بھوک ہڑتال پر بیٹھے ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ سندھ کے ڈاکٹرز کے ساتھ ناانصافی کا سلسلہ طویل عرصے سے جاری ہے۔دیگر صوبوں میں ڈاکٹرز کی تنخواہیں اور دیگر مراعات سندھ کے مقابلے میں کہیں زیادہ ہیں۔ڈاکٹرز کی انجمنوں کے زیر اہتمام بھوک ہڑتالی کیمپ کے ڈاکٹرز کا کہنا تھا کہ سپریم کورٹ کے احکامات کے باوجودڈاکٹرز کی ترقیوں میں محکمہ صحت کی بیورو کریسی رکاوٹ بنی ہوئی ہے۔سندھ کے محکمہ صحت کی بیورو کریسی اس وقت شدید تنقید کی زد میں ہے جس کے خلاف پیرامیڈیکل اسٹاف حتی کہ ڈاکٹرز بھی احتجاج پر مجبور ہیں جس کے باعث پہلے سے ابتری کا شکار صحت کا شعبہ حالت نزع کو پہنچ گیا ہے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر /راولپنڈی صفحہ آخر /کراچی صفحہ اول