قابض اسرائیل کا باب دمشق میں معبدتعمیرکرنے کا اعلان،کا م کا آغاز

قابض اسرائیل کا باب دمشق میں معبدتعمیرکرنے کا اعلان،کا م کا آغاز
قابض اسرائیل کا باب دمشق میں معبدتعمیرکرنے کا اعلان،کا م کا آغاز

  


مقبوضہ بیت المقدس (این این آئی)اسرائیل نے باب دمشق میں ایک معبد تعمیر کرنے کا اعلان کیا ہے اور اس سلسلے میں کام کا آغاز بھی کردیاگیا ہے۔

عرب ٹی وی کے مطابق باب العامود کا موجودہ ڈیزائن عثمانی عہد میں بنایا گیا۔ اس میں تاریخی فن تعمیرکے مطابق خوبصورت نقش ونگارگیا گیا ہے القدس میں قافلوں کے راستے کی مرکزی گذرگاہ ہے، اسے باب نابلس اور باب دمشق بھی کہا جاتا ہے۔مورخین کا کہنا تھاکہ اس دروازے کو باب العامود اس لیے قرار دیا گیا کیونکہ یہ دروازہ اندر سے سیاہ ہے، اس جگہ سے القدس کے دوسرے مقامات کے فاصلے کا بھی تعین کیاجاتا ہے او رمسجد اقصیٰ میں داخلے کے لیے بھی یہ مرکزی دروازہ ہے۔جب سے صہیونی ریاست نے القدس پراپنا غاصبانہ تسلط جمایا ہے دیگر تاریخی مقامات کی طرح باب العامود کا نقشہ بھی بدل دیا گیا ہے۔

قابض فوج نے باب العامود کے باہرایک آہنی پلیٹ فارم بنایا ہے جس کا مقصد فلسطینیوں کی نگرانی کرنا اور انہیں خوف زدہ کرنا ہے۔اس ٹاورکو تفیشی کمرے کے طورپر بھی استعمال کیا جاتا ہے۔ یہ آہنی مرکز نہ صرف فلسطینیوں کو خوف زدہ کرنے کا صہیونی حربہ ہے بلکہ دروازے کی تاریخی، اسلامی اور عرب تشخص کو ختم کرنے کی سازش کی جا رہی ہے۔ حقیقی معنوں میں القدس کے دیگر معالم وآثار کی طرح باب العامود بھی خطرے میں ہے۔

لائیو ٹی وی دیکھنے کے لئے اس لنک پر کلک کریں

مزید : بین الاقوامی


loading...