امریکا پورے خطے کو ٹکڑوں میں تقسیم کرنا چاہتا ہے: اسلامی جہاد

امریکا پورے خطے کو ٹکڑوں میں تقسیم کرنا چاہتا ہے: اسلامی جہاد
امریکا پورے خطے کو ٹکڑوں میں تقسیم کرنا چاہتا ہے: اسلامی جہاد

  


غزہ (یو این پی)فلسطینی عسکری تنظیم اسلامی جہاد نے امریکا کی مشرق وسطی کے حوالے سے سازشوں کو کڑی تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔ اسلامی جہاد کا کہنا ہے کہ امریکا فلسطین سمیت پورے خطے کو ٹکڑوں میں تقسیم کرنا چاہتا ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق غزہ کی پٹی میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے اسلامی جہاد کے مرکزہ رہنما خالد البطش نے کہا کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی طرف سے تیار کردہ مجوزہ امن منصوبہ صدی کی ڈیل خطے کو تقسیم کرنے کی سکیم ہے۔ امریکی صدر کی طرف سے بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کے بعد صہیونی ریاست کی ارض فلسطین پر دست درازی کی سازشوں میں اضافہ ہوگیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ القدس کو اسرائیل کے حوالے کرنا امریکا کہ فلسطین کی تقسیم اور پورے خطے میں نام نہاد صدی کی ڈیل مسلط کرنے سازش کا حصہ ہے۔ صدی کی ڈیل منصوبے کا واحد ہدف فلسطین یا القدس نہیں بلکہ امریکا پورے خطے حتی کہ مصر، سعودی عرب، امارات، کویت اور لنان کو تقسیم کرنا چاہتا ہے۔

لائیو ٹی وی دیکھنے کے لئے اس لنک پر کلک کریں

مزید : بین الاقوامی


loading...