کراچی میں زہریلی گیس کی وجہ سے مزید ہلاکتوں کی تصدیق کردی گئی

کراچی میں زہریلی گیس کی وجہ سے مزید ہلاکتوں کی تصدیق کردی گئی
کراچی میں زہریلی گیس کی وجہ سے مزید ہلاکتوں کی تصدیق کردی گئی

  



کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن)کراچی میں زہریلی گیس کے اخراج سے جاں بحق ہونے والوں کی تعداد ایک درجن سے زائد ہوگئی۔محکمہ صحت نے مزید ہلاکتوں کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا ہے کہ اب تک چودہ افراد اس پراسرارزہریلی گیس کی وجہ سے دم توڑ گئے ہیں۔

نجی ٹی وی ہم نیوز نے محکمہ صحت کے حوالے سے بتایا ہے کہ سول سپتال لائے گئے 2 اور برہانی اسپتال میں لایا گیا1شخص دوران علاج دم توڑ گیا ہے جس کے بعد زہریلی گیس کے اخراج سے ہلاک ہونے والوں کی تعداد14 ہوگئی ہے جبکہ200 سے زائدافراد مختلف ہسپتالوں میں زیرعلاج ہیں۔

فلاحی تنظیم ایدھی کے مطابق رات گئے کیماڑی اسپتال میں 70سے زائد مریض لائے گئے جبکہ27 متاثرہ افرادکوجناح ہسپتال اوردوکوکتیانہ میمن ہسپتال منتقل کیا گیا ہے۔ ایدھی ذرائع کے مطابق ضیاالدین اسپتال کراچی میں اب بھی 4 مریضوں کا علاج جاری ہے۔

ہلاک شدگان کی شناخت معمار بی بی، یاسمین، رضوان، عظیم اختر، احسن، رابش 35 سالہ زیب لنسا ، 40 سالہ عمران اور 50 سالہ یوسف کے نام سے ہوئی ہے۔

کیماڑی میں پھیلنے والی پراسرار زہریلی گیس نے کراچی کے دیگرعلاقوں کو بھی اپنی لپیٹ میں لینا شروع کر دیا ہے۔ اطلاعات کے مطابق جان لیوا زہریلے کیمیکل سے آلودہ ہوا کیماڑی سے نکل کر کھارادراور رنچھوڑ لائن تک جاپہنچی ہے۔

اطلاعات کے مطابق جناح اسپتال میں دس اور سول اسپتال میں چھ متاثرین منتقل کئے گئے ہیں جس کے بعد متاثرین کی کل تعداد 220 تک پہنچ چکی ہے۔

مزید : اہم خبریں /قومی