جلال آباد ،جرگہ خود کش حملہ ،13افراد جاں بحق ،15زخمی

جلال آباد ،جرگہ خود کش حملہ ،13افراد جاں بحق ،15زخمی

  

کابل(مانیٹرنگ ڈیسک،آئی این پی) افغانستان کے شہر جلال آباد میں خود کش حملے کے نتیجے میں13 افراد جان سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں جبکہ 15 سے زائد زخمی ہوگئے۔افغان میڈیا کے مطابق خود کش دھماکہ افغان صوبے ننگر ہار کی صوبائی کونسل کے رکن عبیداللہ شنواری کے گھر کے باہر کیا گیا ہے جس کے نتیجے میں13 افراد جاں بحق ہوگئے ہیں جبکہ 15 سے زائد زخمی ہیں۔ دھماکہ اس وقت کیا گیا ہے جب عبیداللہ شنواری کے گھر جرگہ منعقد ہورہا تھا۔ خودکش حملے کی اطلاع ملتے ہی سیکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا اور امدادی کارروائیاں شروع کردیں۔افغان صدرڈاکٹر اشرف غنی نے جلال آبادمیں صوبائی کونسل کے رکن کے گھر پر خودکش حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ دہشت گردوں میں فورسز سے لڑنے کی اہلیت نہیں رہی اس لئے معصوم شہریوں پر حملہ کررہے ہیں لہٰذانہتے شہریوں کو قتل کرنے والوں سے امن مذاکرت نہیں ہوسکتے،ملک بھر میں دہشت گردوں کو نشانہ بناتے رہیں گے۔افغان میڈیاکے مطابق صدارتی محل سے جاری ہونے والے بیان میں صدر اشرف غنی نے کہا کہ جلال آباد میں صوبائی کونسل کے رکن کے گھر پر خودکش حملہ قابل مذمت ہے،دہشت گرد سیکیورٹی فورسز سے لڑنے کی صلاحیت کھونے کے بعد معصوم شہریوں کونشانہ بنارہے ہیں، نہتے شہریوں کو قتل کرنے والوں سے امن مذاکرت نہیں ہوسکتے۔افغان صدر نے خودکش حملے میں جاں بحق ہونیوالے افراد کے خاندانوں کے ساتھ اظہارہمدردی کیااورکہاکہ ملک بھر میں دہشت گردوں کو نشانہ بناتے رہیں گے،شدت پسندوں کے خلاف سیکیورٹی فورسز کی کارروائیاں جاری رہیں گی۔دریں اثناء افغان چیف ایگزیکٹو عبداللہ عبداللہ نے بھی جلال آباد میں صوبائی کونسل کے رکن کے گھر پر ہونیوالے خودکش حملے کی شدید مذمت کی،اپنے پیغام میں عبداللہ عبداللہ نے سیکیورٹی فورسز کو ہدایت کی کہ وہ حملے میں ملوث افراد کو تلاش کرکے انصاف کے کٹہرے میں لائیں ۔انہوں نے کہا کہ امن کے دشمنوں کو کسی صورت معاف نہیں کیاجائے گا۔

کابل(صباح نیوز)افغانستان میں نیٹوکے ڈرون حملوں میں داعش کے 55جنگجو جبکہ افغان فورسز کے آپریشن میں 37طالبان مارے گئے، پولیس اہلکار نے فائرنگ کرکے اپنے ہی 4 ساتھیوں کو قتل کردیا،کابل پر راکٹ حملوں کی کوشش ناکام بنا دی گئی، داعش نے جلال آباد میں پاکستانی قونصل خانے کے باہر حملہ کرنے والے 2 خودکش بمباروں کی تصاویر جاری کردی۔ذرائع ابلاغ کے مطابق مشرقی صوبہ ننگرہار میں نیٹو کے ڈرون حملوں میں داعش کے 36جنگجومارے گئے۔ دریں اثنا ضلع آچن میں داعش کے 17جنگجو اور ضلع نازیان میں مزید 2 جنگجو ہلاک ہوگئے۔ دریں اثنا صوبہ ہلمند میں افغان نیشنل آرمی نے نیٹو فورسز کی مدد سے کارروائی کی جس میں 37طالبان ہلاک ہوگئے۔افغان نیشنل آرمی کے ایک عہدیدار نے بتایا کہ طالبان جنگجوں نے گزشتہ روز ہلمند کے ضلع نہرسراج میں سیکیورٹی فورسز کی 2چیک پوسٹوں پرحملہ کیاجوابی کارروائی میں جنگجوں کی 3گاڑیاں تباہ کر دی گئیں۔ افغان فورسز کا کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔ صوبہ تخار کے ضلع درقد میں 40طالبان جنگجوؤں نے ہتھیار ڈال کر خود کوحکام کے حوالے کردیا۔ داعش نے افغان شہر جلال آباد میں پاکستانی قونصل خانے کے باہر پرحملہ کرنیوالے 2خودکش بمباروں کی تصاویر جاری کردیں۔ دونوں حملہ آوروں کی شناخت فاروق الخراسانی اور ابو عبید الخراسانی کے نام سے ہوئی ہے۔

مزید :

صفحہ اول -