پراسیکیوشن بل پر بلاوجہ واویلا کیا جا رہا ہے،صوبائی مشیراطلاعات

پراسیکیوشن بل پر بلاوجہ واویلا کیا جا رہا ہے،صوبائی مشیراطلاعات

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر) صوبائی مشیراطلاعات مولا بخش چانڈیو نے پراسیکیوشن بل کے حوالے سے تنقید پر اپنا رد عمل ظاہر کرتے ہوئے کہا ہے کہ پراسیکیوشن بل سے متعلق غلط تاثر پیدا کر کے بلاوجہ واویلا مچایا جا رہا ہے جبکہ بل کا مقصد پراسیکیوشن کے عمل کو مضبوط کرنا اور پراسیکیوٹر کو با اختیار بنانا ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے جاری ہونے والے ایک بیان میں کیا۔صوبائی مشیراطلاعات نے کہا کہ پراسیکیوشن بل میں کوئی ایسا نقطہ شامل نہیں ہے جس میں عدلیہ کے اختیارات میں مداخلت کی گئی ہو۔ کیونکہ کسی بھی مقدمے میں حتمی فیصلے کا اختیار عدلیہ کو ہی حاصل رہے گا۔ انہوں نے کہا کہ ایپکس کمیٹی کے اجلاسوں میں متعدد بار پراسیکیوشن کو مضبوط کرنے پر زور دیا جاتا رہا ہے اوریہ بل اس کی ایک کڑی ہے پراسیکیوشن بل ایپکس کمیٹی کے فیصلوں اور تجاویز کو مد نظر رکھ کر پاس کیا گیاہے۔ انہوں نے کہا کہ پراسیکیوشن بل محکمہ قانون اور محکمہ پراسیکیوشن کے مابین تعاون کو مزید مستحکم کرئے گا۔انہوں نے مزید کہا کہ عوام کو سستے انصاف کی فراہمی کیلئے پاکستان پیپلز پارٹی عدلیہ کی آزادی اور استحکام پر مکمل یقین رکھتی ہے۔ملک میں آئینی جمہوری اداروں کی مضبوطی ، جمہوری اقدار و روایات کے فروغ کیلئے پاکستان پیپلزپارٹی کی قربانیاں اور جدوجہد کسی سے ڈھکی چھپی نہیں ہے۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -