قومی اداروں کی نجکاری کی شدید مزاحمت کریں گے، حافظ سلمان بٹ

قومی اداروں کی نجکاری کی شدید مزاحمت کریں گے، حافظ سلمان بٹ

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر )نیشنل لیبر فیڈریشن پاکستان کے مرکزی جنرل سیکریٹری حافظ سلمان بٹ نے ذمہ داران کی خصوصی نشست سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ نیشنل لیبر فیڈریشن نے قومی اداروں کی نجکاری کے خلاف بھرپور طریقے سے تحریک کا آغاز کردیا ہے اور 20 جنوری کو ملک بھر میں ’’اینٹی نجکاری ڈے‘‘ منایا جائے گا اور محنت کش پورے ملک میں حکومت کی نجکاری کی پالیسی کے خلاف احتجاج کریں گے۔ حافظ سلمان بٹ نے کہا کہ حکومت نے آئی ایم ایف اور ورلڈ بینک کی ایماء پر قومی اداروں کی نجکاری کا فیصلہ کیا ہے۔ جوکہ ہماری سا لمیت کیلئے ایک چیلنج ہے۔ حکمراں اپنی عیاشیوں کیلئے قومی اداروں کو فروخت کررہے ہیں اور محنت کشوں کو بھوک، غربت اور افلاس کے دلدل میں دھکیلا جارہا ہے۔ حافظ سلمان بٹ نے کہا کہ 20 جنوری کو محنت کش پورے ملک میں نجکاری کے خلاف احتجاج کریں گے۔ اس سلسلے میں بڑے بڑے احتجاجی مظاہرے ا ور ریلیاں منعقد ہوں گی۔ این ایل ایف کے تحت اسلام آباد، لاہور، راولپنڈی، پشاور، کراچی، سکھر، حیدرآباد، فیصل آباد، کوئٹہ،گجرانوالہ، سیالکوٹ، ایبٹ آباد ودیگر علاقوں میں بڑے بڑے مظاہرے ہوں گے اور ہم کسی قیمت پر قومی اداروں کی نجکاری نہیں ہونے دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ محنت کش نجکاری کے خلاف این ایل ایف کی تحریک کا حصہ بن جائیں اور پوری قوت کے ساتھ سرمایہ دارانہ نظام کے خلاف احتجاج بلند کیا جائے۔ حافظ سلمان بٹ نے کہا کہ حکمراں اپنی پالیسیوں پر نظر ثانی کریں اور محنت کشوں کو دیوار سے نہ لگایا جائے۔ حکمرانوں نے قومی اداروں کی نجکاری کی پالیسی جاری رکھی تو نیشنل لیبر فیڈریشن اگلے مرحلے میں محنت کش اسلام آباد کا گھیراؤ کرے گی اور پارلیمنٹ کے سامنے دھرنا دیا جائے گا۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -