راج کپور کا مکان گرانا ہے تو گرا دیں‘کوئی جذباتی وابستگی نہیں:رشی کپور

راج کپور کا مکان گرانا ہے تو گرا دیں‘کوئی جذباتی وابستگی نہیں:رشی کپور
راج کپور کا مکان گرانا ہے تو گرا دیں‘کوئی جذباتی وابستگی نہیں:رشی کپور

  

ممبئی (این این آئی)لیجنڈ اداکار راج کپور کے بیٹے اور بالی وڈ سٹار رشی کپور نے پشاور میں اپنے دادا پرتھوی راج کپور کے آبائی مکان کی جزوی توڑ پھوڑ پر ردعمل میں کہا ہے کہ کپور خاندان کی اس عمارت سے کوئی جذباتی وابستگی نہیں لہٰذا پاکستانی حکومت اپنی خواہش کے مطابق اس عمارت کا جو کرنا چاہے کر لے۔ہندوستان ٹائمز نے رشی کے حوالے سے بتایا ’ہم نے اس مکان کو کبھی نہیں دیکھا لہٰذا ہماری اس سے کوئی جذباتی وابستگی نہیں۔ پاکستانی حکومت اگر اسے گرانا چاہے تو وہ ایسا کر لے۔مجھے تو یہ بھی پتہ نہیں کہ آیا وہ عمارت راج کپور کی ذاتی ملکیت تھی یا پھر کرائے کی جگہ، کیونکہ اس زمانے میں ان کے پاس مکان خریدنے کیلئے پیسے نہیں تھے۔

رشی نے کہا کہ ان کے خاندان کو اس عمارت کے گرائے جانے سے کوئی مسئلہ نہیں۔ہم تقسیم سے بہت پہلے ہی انڈیا آ گئے تھے اور وہ عمارت ہم نے کبھی نہیں دیکھی۔جب ہمیں اس کے گرائے جانے سے کوئی مسئلہ نہیں تو پتہ نہیں دوسرے اسے مسئلہ کیوں بنا رہے ہیں۔رشی کا کہنا تھا کہ وہ تینوں بھائی اس عمارت میں کبھی نہیں رہے تو انہیں اس کے ٹوٹنے سے کیا مسئلہ ہو سکتا ہے۔ اطلاعات کے مطابق، پشاور کے علاقے ڈھکی منور شاہ میں موجود راج کپور کی جائے پیدائش کے موجودہ مالک نے ہفتہ کو عمارت کا ایک حصہ گرا دیا تھا۔محکمہ آثار قدیمہ کے حکام نے آخری لمحات تک اس تاریخی عمارت کو بچانے کی کوشش کی لیکن اس وقت تک چار منزلہ عمارت کی بالائی چھت گرائی جا چکی تھی۔سرکاری حکام کے مطابق، عمارت کا باقی حصہ بری طرح متاثر ہوا ہے۔خیبر پختونخوا حکومت نے راج کپور اور دلیپ کمار کے مکانوں کو ثقافتی ورثہ کا حصہ قرار دیتے ہوئے انہیں محفوظ بنانے کا اعلان کیا تھا۔حکام نے ڈان کو بتایا کہ انہیں عمارت گرانے سے متعلق ہفتہ کی صبح پتہ چلا، جس پر انہوں نے کام رکوانے میں فوری مدد کیلئے خان رزاق پولیس سٹیشن سے رابطہ کیا۔

حکام نے بتایا کہ پولیس ان کی مدد کرنے کے بجائے ضابطے کی کارروائیوں میں مصروف ہو گئی اور ان سے تحریری دستاویزات کا مطالبہ کیا۔حکام نے عمارت کے موجودہ مالک کے حوالے سے بتایا کہ انہیں میونسپل اتھارٹی کا ایک نوٹس موصول ہوا تھا جس میں عمارت کو خستہ حال قرار دیتے ہوئے اسے گرانے کا حکم تھا۔حکام نے بتایا کہ ٹوٹ پھوٹ کے باوجود عمارت کا ڈھانچہ مستحکم ہے اور وہ اسے مزید ٹوٹ پھوٹ سے بچانے کی پوری کوشش کریں گے۔

مزید :

تفریح -