خاتون نیوزاینکر کا پروگرام شروع ہونے سے پہلے ایسا مطالبہ کہ ساتھی اینکر کو کپڑے پہننا پڑ گئے

خاتون نیوزاینکر کا پروگرام شروع ہونے سے پہلے ایسا مطالبہ کہ ساتھی اینکر کو ...
خاتون نیوزاینکر کا پروگرام شروع ہونے سے پہلے ایسا مطالبہ کہ ساتھی اینکر کو کپڑے پہننا پڑ گئے

  

سڈنی(نیوزڈیسک) نیوزکاسٹرٹی وی پر ہمیشہ مسکراتے چہرے کے ساتھ نظر آتے ہیں لیکن آسٹریلوی چینل 9نیوز پر اس وقت انتہائی دلچسپ صورتحال پیدا ہوگئی جب نیوزکاسٹر امبر شرلاک ، ایک اور نیوزکاسٹر جولی سنوک اور مہمان سینڈی ریا نے ایک ہی رنگ (سفید)کے کپڑے زیب تن کررکھے تھے۔ نیوزکاسٹر اور میزبان امبرشرلاک کو اس بات کا شدید غصہ آنے لگا اور لائیو جانے سے قبل وہ ساتھی نیوز کاسٹر جولی سنوک پر برس پڑی۔ امبر کاکہنا تھا کہ اس نے جولی کو پہلے ہی کہا تھا کہ وہ اپنالباس تبدیل کرے لیکن اس نے جان بوجھ کر اس بات کو نظرانداز کیا، جولی کاکہنا تھا کہ وقت کی کمی کی وجہ سے وہ لباس تبدیل نہ کرپائی۔ اس تمام صورتحال کو کیمرے کی آنکھ نے محفوظ کرلیا اور اس وقت پوری دنیا میں اس پرگفتگو ہورہی ہے۔ امبر نے شدید غصے میں کہا،”تمہارے پاس کافی وقت تھا،میں نے تمہیں(جولی)کو دوگھنٹے قبل کہا تھاکہ کپڑے تبدیل کرلو لیکن تم نے میری بات کو سنجیدگی سے نہیں لیا۔“اس دوران مہمان سینڈی ریا نے اپنا لباس تبدیل کرنے کا کہاتو امبر کا کہنا تھا کہ نہیں آپ کویہ کرنے کی ضرورت نہیں۔”آپ نے ہمیں پہلے ہی بتادیا تھا کہ آپ کالباس سفید ہوگالیکن تمام لوگ سفید رنگ کے کپڑوں میں نہیں آسکتے۔“

جوان نظر آنے والے اس انتہائی بوڑھے شخص کی عمر دراصل کتنی ہے؟ جواب اتنا زیادہ کہ کوئی سوچ بھی نہیں سکتا

اس دوران جولی نے کافی کہاکہ اس کا لباس نیلے رنگ کے شیڈ میں ہے لیکن امبر نے اس کی ایک نہ سنی۔بالآخر جولی کو اٹھنا پڑا اور اس نے سیاہ رنگ ی جیکٹ زیب تن کرلی۔ اس کے بعد جب یہ پروگرام لائیوہوتو ان دونوں کے چہرے پر بالکل بھی ایسے آثار نہ تھے کہ ان کی آپس میں چند لمحے پہلے تلخ کلامی ہوئی ہے۔ تاہم اس پرگروام کے بعد امبر نے اپنے درشت رویے پر معافی مانگی ہے،اس کاکہناہے کہ لائیو پروگرام کے دباﺅ کی وجہ سے وہ سخت ہوگئی اور اسے ایسا نہیں کرنا چاہیے تھا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس