ملائیشین کرکٹ انتظامیہ نے پاکستان محفوظ ملک قرار دیدیا ، انضمام کی فیکا کو دورہ کی دعوت

ملائیشین کرکٹ انتظامیہ نے پاکستان محفوظ ملک قرار دیدیا ، انضمام کی فیکا کو ...

اسلام آباد (آئی این پی) پاکستان کا دورہ کرنے والی ملائیشیا کی کرکٹ ٹیم کی انتظامیہ نے پاکستان کو کرکٹ کے بین الاقوامی مقابلوں کے لیے محفوظ ملک قرار دیتے ہوئے کہا کہ وہ اپریل میں دوبارہ دورہ کریں گے۔دوسری طرف چیف سلیکٹر انضمام الحق نے فیکاکودورہ پاکستان کی دعوت دیدی۔میڈیا رپورٹ کے مطابق ملائیشیا کرکٹ ٹیم کے منیجر شنکر ریتنام نے دس روزہ دورے کے اختتام پر کہا کہ پاکستان ٗکرکٹ کے بڑے سطح کے مقابلوں کے انعقاد کیلئے ایک موزوں ملک ہے۔شنکر ریتنام نے کہا کہ جہاں تک سیکیورٹی کا تعلق ہے تو وہ بہترین ہے اور ہم یہاں پر محظوظ رہے۔ریتنام نے پاکستان میں کئی برس سے بین الاقوامی کرکٹ کی عدم موجودگی پر کہا کہ بین الاقوامی مسابقتی کرکٹ کے لیے چیزیں بہتر ہیں ہمارا دورہ سیکیورٹی کے کسی مسئلے کے بغیر ختم ہوگیا۔انہوں نے کہاکہ ملائیشین ٹیم کو بھی دورے کے لیے روانہ ہونے سے قبل اسی طرح کے پروپیگنڈے کا سامنا کرنا پڑا تھا تاہم ہم نے پاکستان کے دورے کو بلاجھجھک حتمی شکل دے دی' جو ٹیم کے بہتر مفاد میں تھا ٗملائیشیا کرکٹ ٹیم کے منیجر اور کوچ دونوں نے پاکستان کرکٹ بورڈ کی مہمان نوازی پر شکریہ ادا کیا۔قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان اور چیف سلیکٹر انضمام الحق نے بھی پاکستان کو کھیلوں کیلئے محفوظ ملک قرار دیتے ہوئے انٹرنیشنل کرکٹرز ایسو سی ایشن کو پاکستان کے دورے کی دعوت دیدی ، جن کا کہنا تھا کہ فیکا پاکستان آئے اور یہاں کے حالات کا جائزہ لے،پاکستان کرکٹ کیلئے محفوظ ملک بن چکا ہے۔ گزشتہ روز گفتگو کرتے ہوئے انضمام الحق کا کہنا تھا کہ پاکستان سپر لیگ کا فائنل لاہور میں کرانا خوش آئند بات ہے ، ملک میں انترنیشنل کرکٹ کا ایک بڑا ایونٹ ہونے جا رہا ہے جس کے کامیاب انعقاد کیلئے پی سی بی نے بھر پور کوششیں کی ہے۔ ایک سوال کے جواب میں سابق کپتان کا کہنا تھا کہ وہ پاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ کی واپسی کیلئے پر امید ہے ، پی ایس ایل کے کامیاب فائنل کا انعقادپاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ کی بحالی کا باب ثابت ہو گا۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی