خیبرایجنسی ،پہلی سفاری سروس شروع کرنے کی تیاری مکمل

خیبرایجنسی ،پہلی سفاری سروس شروع کرنے کی تیاری مکمل

خیبر ایجنسی (بیورورپورٹ) پشاور سے لنڈی کوتل تک پہلی سفاری بس سروس شروع کرانے کی تیاری مکمل کر لی گئی ہے ، ، سیاحوں کی دلچپسی والے مناظر کی نشاندہی کا ٹاسک ایڈیشنل پی اے خیبرمیر رضا ازگان کو سونپ دیا گیا ہے ، درہ خیبر پر قائم پرانی تعمیرات اور آثار قدیمہ کی تذئین وآرائش بھی ترجیحات میں شامل ہیں ، پینتیس کلو میٹر طویل علاقے کو سیاحوں کی توجہ کا مرکز بنائیں گے، ہفتے میں ایک بار بس سروس چلانا فائنل کر دیا گیا ہے، سیاحوں کو درہ خیبر پر واقع تاریخی مقامات اور لنڈی کوتل بازار کی سیر کرائی جائیگی، منصوبے سے مقامی لوگوں کی معیشت بہتر ہو سکے گی، پی اے خیبر خالد محمود کی میڈیا سے گفتگو ۔خیبر ایجنسی کے نوجوان پولیٹیکل ایجنٹ کیپٹن ریٹائرڈ خالد محمود نے میڈیا کو بتایا کہ پہلی بار انہوں نے وادی تیراہ جیسے خوبصورت علاقے میں سپورٹس گالا کیااور جمرود سے طورخم تک جیپ ریلی نکالی جیسے سیاح اور عام لوگ بہت محظوظ ہوئے اور ایسے ہی تفریحی اور مثبت سرگرمیوں کے ذریعے علاقے کا سوفٹ امیج دنیا کو دکھایا جا سکتا ہے جس سے یہ بھی ثابت ہوا کہ خیبر ایجنسی میں امن قائم کر دیا گیا ہے پی اے خیبر خالد محمود نے بتایا کہ ایک معیاری سفاری بس خریدنے کے لئے انہوں نے کوششیں تیز تر کر دی ہیں جس کو خوبصورت رنگوں اور اہم نعروں سے مزئین کیا جائیگا تاکہ سیاحوں اور مقامی لوگوں کو اس کی طرف متوجہ کیا جا سکے انہوں نے کہا کہ سیاحوں کو پشاور سے درہ خیبر کے راستے پینتیس کلو میٹر سفر کے دوران جمرود ، شگئی اور علی مسجد کے قلعے دکھائے جاینگے اور تاریخی لنڈی کوتل بازار، خیبر فائفلز مس، میچنی پوسٹ ،تیمور لنگ اور طورخم بارڈر کی مختصر سیر بھی کرائی جائیگی خالد محمود نے کہا کہ مذید تاریخی مقامات اور آثار قدیمہ کی نشاندہی کے لئے ایڈیشنل پی اے خیبر میر رضا ازگان اور اسسٹنٹ پولیٹیکل ایجنٹ جمرود ضیاء الرحمان کی سرپرستی میں ایک ٹیم بھی تشکیل دیدی گئی ہے انہوں نے کہا کہ ایف سی کے حکام بھی سیاحت کے حوالے سے اس اہم پروجیکٹ میں پولیٹیکل انتظامیہ کے ساتھ بھر پور تعاؤن کر نے کے لئے تیار ہیں اور ملکر اس کی کامیابی کے لئے کوشاں ہیں تاکہ ملکی اور بین الاقوامی سطح کے سیاحوں کی آمد کے لئے درہ خیبر کو پرکشش اور دلچسپ بنا یا جا سکے جس سے علاقے کی تاریخی اور جغرفیائی حیثیت کی بہتر عکاسی ہو سکے گی اور اس سے مقامی لوگوں کی معیشت پر بھی مثبت اثرات مرتب ہونگے انہوں نے کہا کہ سفاری بس سروس کو ابتداء میں ہفتے میں ایک بار چلانے کی منصوبہ بندی کی گئی ہے جبکہ بعد آزاں اس میں اضافہ بھی کیا جاسکتا ہے سابق ڈائریکٹر صحرائی ٹریولز ظہور درانی نے بھی اس حوالے سے کہا ہے کہ سفاری بس اور سفاری ریل چلانا بنیادی طور پر معلوماتی ہونگی جس میں سیاحوں کو علاقے کی تاریخ اور جغرافیائی حیثیت کے بارے میں حقائق پر مبنی معلومات فراہم کی جائیگی خیبر رائفلز کے حکام نے بھی میڈیا سے ملاقات کے دوران اس اہم منصوبے سے متعلق انکشاف کرتے ہوئے کہا تھا کہ آئی جی ایف سی درہ خیبر پر واقع تاریخی مقامات کی تزئین و آرائش میں گہری دلچسپی رکھتے ہیں تاکہ دنیا بھر کے سیاحوں کو اس طرف راغب کر کے علاقے کی نمایاں خصوصیات کو اجاگر کر سکے جس کے بہت سارے فائدے ہونگے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر