’ہر برطانوی شہری کو اُردو سیکھنی چاہیے کیونکہ۔۔۔‘ کس معروف ترین برطانوی شخصیت نے یہ اعلان کردیا؟ جان کر ہر کوئی دنگ رہ گیا

’ہر برطانوی شہری کو اُردو سیکھنی چاہیے کیونکہ۔۔۔‘ کس معروف ترین برطانوی ...
’ہر برطانوی شہری کو اُردو سیکھنی چاہیے کیونکہ۔۔۔‘ کس معروف ترین برطانوی شخصیت نے یہ اعلان کردیا؟ جان کر ہر کوئی دنگ رہ گیا

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) لگ بھگ ہر بیرونی ملک نے اپنے ہاں آنے والے تارکین وطن کے لیے اپنی زبان سیکھنا لازمی قرار دے رکھا ہے۔ برطانیہ جانے والوں کے لیے بھی انگریزی سیکھنا لازمی ہے لیکن اب پہلی بار ایک برطانوی پروفیسر نے برطانوی باشندوں کو اردو اور پولش سیکھنے کی ہدایت کر دی ہے۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق کیمبرج یونیورسٹی کی پروفیسر وینڈے آئرس بینیٹ نے کہا ہے کہ ”تارکین وطن کو بہترین طریقے سے خوش آمدید کہنے کے لیے برطانوی باشندوں کو اردو اور پولش سیکھنی چاہیے۔“

امریکہ کے سب ہتھیاروں سے زیادہ طاقتور! روس نے ایسے خطرناک ترین ہتھیار کی ویڈیو جاری کردی کہ امریکی فوج میں کھلبلی مچ گئی

وینڈے آئرس کا کہنا تھا کہ ”دو تہذیبوں کے لوگوں کا باہم انضمام اور ہم آہنگی یک طرفہ کام نہیں ہے۔ تارکین وطن کو بھی برطانیہ آنے کے بعد انگریزی سیکھنی چاہیے لیکن برطانوی باشندوں کو بھی ایک قدم آگے بڑھتے ہوئے تارکین وطن کی زبانیں سیکھنی ہوں گی کیونکہ میرے خیال میں مقامی باشندوں اور تارکین وطن کے درمیان ہم آہنگی دوطرفہ عمل ہے۔ یہ درست ہے کہ ہمیں تارکین وطن سے انگریزی سیکھنے کی توقع کرنی چاہیے لیکن بحیثیت قوم ہم دوسری زبانیں سیکھنے کی ضرورت محسوس نہیں کرتے اور اس کا تمام بار تارکین وطن پر ڈال دیتے ہیں۔برطانوی شہریوں کو بھی انگریزی کے علاوہ کچھ کمیونٹی زبانیں اردو، پنجابی اور پولش وغیرہ سیکھنی چاہئیں۔جن علاقوں میں ان زبانوں کے بولنے والے تارکین وطن رہائش پذیر ہیں ان علاقوں کے برطانوی شہریوں کو تو لازمی ان زبانوں سے آشنا ہونا چاہیے۔ان زبانوں کا بنیادی علم بھی دو طرح کے تہذیبی پس منظررکھنے والے لوگوں کے میل جول اور ہم آہنگی میں انتہائی فائدہ مند ثابت ہو گا۔ ہمیں تارکین وطن پر اپنی زبان اور ثقافت مسلط کرنے کی بجائے خود کو ان کی زبانوں اور ثقافتوں کے بھی قریب لانا چاہیے۔“

مزید : بین الاقوامی