محکمہ خوراک نے دسمبر 2018 کی ماہانہ کارکردگی رپورٹ جاری کردی

محکمہ خوراک نے دسمبر 2018 کی ماہانہ کارکردگی رپورٹ جاری کردی

  

پشاور( سٹاف رپورٹر)محکمہ خوراک نے دسمبر 2018 کی ماہانہ کارکردگی رپورٹ جاری کردی ہے رپورٹ کے مطابق خیبر پختونخوا میں گزشتہ ماہ کے دوران 4746 دکانوں کا معائنہ کیا گیا اس دوران سرکاری نرخ نامے کی خلاف ورزی پر مجموعی طور پر910 افراد کو 25 لاکھ 55 ہزار پانچ سو روپے جرمانے کئے گئے پشاور ڈویژن میں 959 دکانوں کا معائنہ کیا گیا اور 224 افراد پر قانون کے خلاف ورزی پر 7 لاکھ 23 ہزار روپے جرمانے عائد کئے گئے مردان ڈویژن میں 205 دوکانوں کو چیک کیا گیا اور خلاف ورزی کرنے پر2 لاکھ 20 ہزار روپے جرمانہ عائد کیا گیا جبکہ مالاکنڈڈویژن میں 1269 دوکانوں کا معائنہ اور 1256 افراد کے خلاف 5 لاکھ 57 ہزار روپے جرمانے عائد کئے گئے کوہاٹ ڈویژن میں 805 دوکانوں کا معائنہ کیا گیا جبکہ 176 افراد کو نرخ نامے کی خلاف ورزی پر 1لاکھ 31 ہزار پانچ سو روپے جرمانے کئے اور ہزارہ ڈویژن میں 1030 دکانوں کا معائنہ کیا اور 256افراد پر 7 لاکھ 58 ہزار 500 روپے جرمانہ جبکہ ڈیرہ اسمعیل خان ڈویژن میں 328 دوکانوں کا معائنہ کیا گیا اور 34 افراد کے خلاف 1 لاکھ 7 ہزارروپے جرمانہ جبکہ بنوں ڈویژن میں 150 دوکانوں کا معائنہ کیا گیا اور 121 افرادکو خلاف ورزی پر 58 ہزار 500 روپے جرمانہ کیا گیا , محکمہ خوراک کی جانب سے ماہانہ کارکردگی رپورٹ کیمطابق ہزارہ ڈویژن میں سب سے زیادہ 7 لاکھ 58 ہزار پانچ سو روپے جرمانے کی مد میں وصول کئے گئے دوسرے نمبر پر پشاور ڈویژن 7 لاکھ 23 ہزار روپے جبکہ تیسرے نمبر پر مالاکنڈ ڈویژن میں 5 لاکھ 57 ہزار روپے جرمانہ وصول کئے گئے۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -