ناجائز بچے کو جنم دے کر چھوڑنے والی بن بیاہی لڑکی نے بچے کے باپ کا نام بتادیا

ناجائز بچے کو جنم دے کر چھوڑنے والی بن بیاہی لڑکی نے بچے کے باپ کا نام بتادیا
ناجائز بچے کو جنم دے کر چھوڑنے والی بن بیاہی لڑکی نے بچے کے باپ کا نام بتادیا

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) گزشتہ دنوں لاہور کے ایک ہسپتال میں ناجائز بچے کو جنم دینے والی لڑکی نے اپنے بچے کے باپ کا نام بتادیا۔

لاہور کے علاقے شاد باغ کے ہسپتال میں کچھ روز پہلے 18 سالہ لڑکی نے ایک بچے کو جنم دیا اور اسے بیت الخلاءکے فلش کی ٹینکی میں پھینک دیا۔ بچے کو کوٹ خواجہ سعید ہسپتال کے  عملے نے باہر نکالا اور اس سارے معاملے کی ویڈیو ریکارڈ کی جو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی۔

کچھ روز گزر جانے کے بعد لڑکی نے اس معاملے پر خاموشی توڑ دی اور بتایا ہے کہ اس کے بچے کا باپ اس کا کراچی میں رہنے والا کزن ہے۔ 18 سالہ بن بیاہی ماں نے بتایا کہ وہ گزشتہ برس اپنی پھوپھی کے گھر کراچی گئی تھی جہاں اس کی اپنے کزن اویس سے دوستی ہوگئی اور دونوں نے جسمانی تعلق قائم کرلیا ۔

لڑکی نے بتایا کہ جب وہ واپس آنے لگی تو اویس نے یقین دہانی کرائی کہ وہ اپنے گھر والوں کو بھیج کر شادی کی بات کرے گا لیکن اس سے پہلے ہی وہ دل کا دورہ پڑنے سے انتقال کرگیا۔ لڑکی نے کہا کہ وہ اپنے گھر والوں اور اللہ سے معافی چاہتی ہے اور وعدہ کرتی ہے کہ آئندہ ایسی کوئی حرکت نہیں کرے گی۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /علاقائی /پنجاب /لاہور