اگر کسی نے سوشل میڈیا پر جھوٹی خبر پھیلائی تو کتنی سزا ہوگی؟ سعودی عرب نے اعلان کردیا

اگر کسی نے سوشل میڈیا پر جھوٹی خبر پھیلائی تو کتنی سزا ہوگی؟ سعودی عرب نے ...
اگر کسی نے سوشل میڈیا پر جھوٹی خبر پھیلائی تو کتنی سزا ہوگی؟ سعودی عرب نے اعلان کردیا

  

ریاض (ڈیلی پاکستان آن لائن) سعودی عرب کی پبلک پراسیکیوشن نے وارننگ دی ہے کہ افواہیں اور سوشل میڈیا پر جھوٹی خبریں پھیلانے والوں کو سخت سزائیں دی جائیں گی۔

عرب نیوز کے مطابق پبلک پراسیکیوشن کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ اگر کسی نے امن و امان کی صورتحال کے بارے میں افواہ پھیلائی تو اسے سخت سزا کا سامنا کرنا پڑے گا ۔ اس کے علاوہ ان لوگوں کو بھی سخت سزاؤں کا سامنا کرنا پڑسکتا ہے جو سوشل میڈیا پر دشمن ملکوں کی جانب سے گھڑی گئی جھوٹی خبروں کو پھیلاتے ہیں۔

اتھارٹی نے بتایا کہ حال ہی میں ریاض میں میوزک کنسرٹ کے حوالے سے جھوٹی خبریں پھیلائی گئیں جن کا تعلق بیرون ملک سے ہے۔ جن سعودی شہریوں نے ان افواہوں کو پھیلانے میں حصہ لیا ہے انہیں نوٹسز جاری کردیے گئے ہیں۔

پبلک پراسیکیوشن کے مطابق اس طرح کے جرائم کی سعودی عرب میں سزا پانچ سال سے زائد قید اور 30 لاکھ ریال تک جرمانہ ہوسکتی ہے۔

مزید :

عرب دنیا -