’تیزاب اور آگ سے جلانے کے جرم کا بل قومی اسمبلی میں پیش ، مجرموں کے لئے کیا سزا تجویز کی گئی ؟جان کر ہی کپکپی طاری ہو جائے 

’تیزاب اور آگ سے جلانے کے جرم کا بل قومی اسمبلی میں پیش ، مجرموں کے لئے کیا ...
’تیزاب اور آگ سے جلانے کے جرم کا بل قومی اسمبلی میں پیش ، مجرموں کے لئے کیا سزا تجویز کی گئی ؟جان کر ہی کپکپی طاری ہو جائے 
سورس: File Photo

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) قومی اسمبلی میں تیزاب یا آگ سے کسی شخص کو جلانے والے مجرم کے لئے سخت سزائیں مقرر کرنے کے بل سمیت چھ نئے بل پیش کر دیئے گئے ، تمام بل متعلقہ قائمہ کمیٹیوں کے سپرد کر دیئے گئے ۔

 قومی اسمبلی کا اجلاس سپیکر اسد قیصر کی صدارت میں شروع ہوا ،اجلاس میں رکن اسمبلی نفیسہ خٹک نے اسلام آباد میں گورنمنٹ سافٹ کنونشنل ٹریننگ سکلز کے فقدان سے متعلق توجہ دلاو نوٹس پیش کیا جس کا پارلیمانی سیکرٹری برائے تعلیم وجیہہ قمر نے جواب دیا ۔ جس کے بعد نفیسہ خٹک نے اسلام آباد آبی تحفظ بل 2022ءپیش کیا،پارلیمانی سیکرٹری برائے داخلہ شوکت علی نے کہا یہ اچھا بل ہے، اس کی حمایت کرتے ہیں، سپیکر نے بل متعلقہ قائمہ کمیٹی کے سپرد کردیا گیا۔

پاکستان پیپلز پارٹی کی رکن ڈاکٹر مہرین رزاق بھٹو نے تیزاب اور آگ سے جلانے پر مبنی تشدد کو خاص طور پر جرم قرار دینے کے لئے شفاف اور فوری سماعت کا انتظام اور ایسے گھناﺅنے جرائم کی فوری سماعت کرکے اور اس سے منسلک اور اس کے ضمنی معاملات کی غرض سے احکامات وضع کرنے کا بل”تیزاب اور آگ سے جلانے کے جرم کا بل 2022 ء“پیش کیا اور کہا کہ ایک رپورٹ کے مطابق 32فیصد سے زیادہ خواتین پاکستان میں  جسمانی تشدد کا شکار ہوتی ہیں، اسلام آباد کی حددود میں کوئی ایسا بل نہیں ہے جس سے تیزاب کے حملوں کو روک سکیں ، متاثرین کے لئے فنڈ بھی قائم کیا جائے، پارلیمانی سیکرٹری برائے داخلہ شوکت علی نے کہا کہ یہ اچھا بل ہے اس کی حمایت کرتے ہیں،سپیکر نے بل متعلقہ قائمہ کمیٹی کے سپرد کردیا، بل کے متن کے تیزاب یا آگ سے جلانے کے حملے میں کسی فرد کی موت واقع ہو جائے تومجرم کو سزائے موت دی جائے گی ، جبکہ دانستہ طور پر کسی کو تیزاب یا آگ سے جلانے کے حملہ سے زخم پہنچانے والے مجرم کو قید بامشقت کی سزا دی جائے گی جو سات  سال سے کم نہیں ہوگی ، حکومت متاثرہ فرد کی مالی مدد کرے گی ۔

مسلم لیگ ن کے رکن خرم دستگیر نے دستور(ترمیمی)بل2022ءپیش کیا۔ جمعیت علماءاسلام ف کے رکن اسمبلی جمال الدین نے ناشائستہ اشتہار کا امتناع  (ترمیمی)بل 2022ءپیش کیا ۔بل کے تحت ناشائستہ اشتہار پر دوسال قید اور ناشائستہ اشتہار سے حاصل کردہ رقم کا دوگنا جرمانہ یا دونوں سزائیں ہو سکیں گی۔پاکستان تحریک انصاف کی رکن عظمی ریاض نے علاقہ دارالحکومت اسلام آباد تپ دق (اطلاع نامہ )بل2022ء پیش کیا جبکہ پاکستان تحریک انصاف کی رکن نورین فاروق خان نے فوجداری قوانین(ترمیمی) بل 2022ءپیش کیا، تمام بل متعلقہ قائمہ کمیٹیوں کے سپرد کر دیئے گئے۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -