ائیرپورٹ پر چینی شہریوں کی تلاشی، پتلونوں کے اندر سے ایسی چیز برآمد کہ سکیورٹی اہلکاروں کی بھی آنکھیں کھلی کی کھلی رہ گئیں

ائیرپورٹ پر چینی شہریوں کی تلاشی، پتلونوں کے اندر سے ایسی چیز برآمد کہ ...
ائیرپورٹ پر چینی شہریوں کی تلاشی، پتلونوں کے اندر سے ایسی چیز برآمد کہ سکیورٹی اہلکاروں کی بھی آنکھیں کھلی کی کھلی رہ گئیں

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

بیجنگ (نیوز ڈیسک) چین کے شینزن ائرپورٹ پر بیرون ملک روانہ ہوتے ہوئے 12 چینی سیاحوں کے ایک گروپ نے سکیورٹی حکام کو اس وقت حیرت میں مبتلا کردیا جب ان کی پتلونوں سے 21 ملین یوان (تقریباً 35 کروڑ پاکستانی روپے) کا سونا برآمد ہوگیا۔

’اس نوجوان نے نوکری چھوڑ کر یہ پودا اُگانا شروع کردیا اور دنوں میں کروڑ پتی بن گیا‘

اخبار ڈیلی میل کی رپورٹ کے مطابق گروپ میں چھ مرد اور چھ خواتین شامل تھیں اور یہ بظاہر سیاحت کے لئے چین سے باہر جارہے تھے۔ چینی سکیورٹی حکام کا کہنا ہے کہ سیاحوں کی حرکات کو مشکوک پاکر ان کی تلاشی لی گئی تو اہلکار یہ دیکھ کر حیران رہ گئے کہ ان میں سے ہر ایک کی پتلون کے اندر سونے کی ٹکیاں موجود تھیں۔ سیاحوں کے بھیس میں چھپے سمگلروں میں سے ہر ایک کے لباس میں چھ سے سات سونے کی ٹکیاں چھپی ہوئی تھیں۔ سکیورٹی اہلکاروں نے ان کی پتلونوں سے سونے کی کل 76 ٹکیاں برآمد کیں، جن میں سے ہر ایک کا وزن ایک کلوگرام تھا۔ برآمد کئے گئے سونے کا تجزیہ کیا گیا تو پتہ چلا کہ یہ تقریباً 100 فیصد خالص تھا۔

چینی کسٹمز حکام کے مطابق 50 گرام سے زائد سونا لیجانے والے مسافر کے لئے لازمی ہے کہ وہ اہلکاروں کو اس کی موجودگی کی اطلاع دے لیکن ان سمگلروں سے 76 کلوگرام سونا برآمد ہوا، جسے انہوں نے مکمل طور پر پوشیدہ رکھنے کی کوشش کی تھی۔ ملزمان کی گرفتاری کے بعد کیس اینٹی سمگلنگ ڈیپارٹمنٹ کو منتقل کردیاگیا جو مزید تحقیقات جاری رکھے ہوئے ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس