جعلی وغیر معیاری ادویات کیخلاف بڑے پیمانے پر کریک ڈاؤن شروع

جعلی وغیر معیاری ادویات کیخلاف بڑے پیمانے پر کریک ڈاؤن شروع

لاہور(لیاقت کھرل)وزیراعلیٰ پنجاب کے حکم پر جعلی اور غیر معیاری ادویات کے خلاف بڑے پیمانے پر کریک ڈاؤن شروع، ٹاسک فورس تشکیل دے دی گئی۔ آج سے جعلی ادویات کے دھندے ، غیر معیاری اور زائد المعیاد ادویات کے خلاف فیکٹریوں اور مارکیٹوں میں چھاپے مارے جائیں گے۔ وزیراعلیٰ پنجاب کو روزانہ کی بنیاد پر رپورٹ پیش کی جائے گی۔تفصیلات کے مطابق وزیر اعلیٰ پنجاب کے حکم پر جعلی اور غیر معیاری ادویات کے دھندے کے خلاف بڑے پیمانے پر آپریشن شروع کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔ جس کی وزیر اعلیٰ پنجاب نے باقاعدہ منظوری دے دی ہے۔ اس سلسلہ میں وزیراعلی پنجاب محمد شہبازشریف کے حکم پر جعلی و غیر معیاری ادویات کے خاتمہ کے لئے ٹاسک فورس تشکیل دے دی گئی ہے جس کے کنونیر پارلیمانی سیکرٹری برائے صحت خواجہ عمران نذیر ہوں گے۔پراونشل ٹاسک فورس برائے ا نسداد جعلی و غیر معیاری ادویات کے دیگر ارکان میں ایڈیشنل چیف سیکرٹری کے علا وہ ارکان صوبائی اسمبلی، پولیس کے اعلی افسران، سیکرٹری سپیشلائزڈ ہیلتھ کیئر اینڈ میڈیکل ایجوکیشن، سیکرٹری پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ، سیکرٹری پراسکیوشن، ایڈیشنل آئی جی سپیشل برانچ، چیف ڈرگ انسپکٹر پنجاب ،ڈی جی PAFDA ، ڈی جی ہیلتھ پنجاب، سیکرٹری PQCB ، متعلقہ کمشنرز ،آر پی اوز، ڈی سی اوز، ڈی پی اوز ، سی پی او پولیس لاہوراور چیئرمین PITB شامل ہیں۔پارلیمانی سیکرٹری صحت و کنونیر پراونشل ٹاسک فورس برائے انسداد جعلی و غیر معیاری ادویات خواجہ عمران نذیر نے اس حوالے سے ’’پاکستان‘‘ کو بتایا کہ ٹاسک فورس صوبے میں جعلی ادویات کے دھندے کے علاوہ مارکیٹ میں زائد المعیاد ادویات کی فروخت کا بھی سدباب کر ے گی۔ڈاکٹری نسخہ کے بغیر جان بچانے والی ادویات کی فروخت کو بھی چیک کیا جائے گا، ادویات صرف میڈیکل سٹورز اور فارمیسی پر فروخت ہوگی۔ٹاسک فورس کو اس حوالے سے مروجہ قوانین کا جائزہ لینے اور انہیں مزید موثر بنانے کے لئے ترامیم تجویز کرنے کا اختیار بھی ہوگا۔ ڈرگ انسپکٹرز کی کارکردگی مانیٹر کی جائے گی۔ٹاسک فورس ادویہ ساز اداروں اور میڈیکل سٹورز کا وزٹ کرکے ڈرگ ایکٹ اور قوانین پر عملدرآمد یقینی بنائے گی۔خواجہ عمران نذیر نے کہاکہ ٹاسک فورس صوبے میں عطائیت کے خاتمہ کیلئے بھی اپنی تجاویز پیش کرے گی۔ انہوں نے بتایا کہ پراونشل ٹاسک فورس عطائیوں، نیم حکیموں اور ایسی ادویات تیار کرنے و الے اداروں کی جانب سے مروجہ قانون کے خلاف ، اشتہار بازی کرنے والوں کے خلاف بھی ایکشن لینے کی مجاز ہوگی۔ خواجہ عمران نذیر نے مزید بتایا کہ پراونشل ٹاسک فورس غیر قانونی طریقہ سے قائم ہونے والے میڈیکل سٹورز کی Mushroom گروتھ کے معاملہ کا بھی جائزہ لے گی اور جعلی اور غیر معیاری ادویات کے پکڑے جانے پر میڈیکل سٹورز سیل اور فیکٹری مالکان کے خلاف مقدمات درج ہوں گے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1