اسلم ڈھولاکو جعلی پولیس مقابلہ میں ماراگیا، جمشید احمد دستی

اسلم ڈھولاکو جعلی پولیس مقابلہ میں ماراگیا، جمشید احمد دستی

چوک میتلا(نامہ نگار) تھا نہ ٹبہ سلطان پورکی حدود میں آکر میاں چنوں کی پولیس کے اہلکار سادہ کپڑوں میں آکر جعلی مقابلہ میں بے قصو ر 9بچوں کے باپ کو آکر مار جاتے ہیں ایس(بقیہ نمبر20صفحہ12پر )

ایچ او تھا نہ ٹبہ سلطان پور چوہدری انصر علی جٹ تمام صورتحال سے لاعلم ہے کیا یہ ممکن ہے کہ متعلقہ حدود کے ایس ایچ او کو علم تک نہ ہو اور دوسرے ضلع کی پولیس آکر یہاں پر مقابلہ کر جائے یہ سب پولیس اورنوید وڑائچ کی ملی بھگت لگ رہی ہے ان خیالات کا اظہار رکن قومی اسمبلی مظفر گڑھ جمشید احمد خان دستی نے گذشتہ روز پاکستان سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا جمشید احمد خان دستی نے کہا کہ صبح8 بجے سے روڈ بند تھا چوک میتلا کے ایک ٹاؤٹ نوید وڑائچ نے میاں چنوں سے پولیس بلوائی گئی 100کلو میٹر میٹر کا فاصلہ طے کر کے میاں چنوں کی پولیس ٹبہ سلطان پور کی حدو د میں آجاتی ہے یہاں کے ڈی پی او وہاڑی ، ڈی ایس پی میلسی اور ایس ایچ او کو کچھ بھی معلوم نہیں تقریباََ18گھنٹے سے زیادہ وقت چوک میتلا میں روڈ بند رہا کسی نے کوئی نوٹس نہیں لیا یہ کیسا قانون ہے اور کسی حکو مت ہے جہاں غریب عوام کی سننے والا کوئی نہیں ہے میں محمد اسلم ڈھولا کے گھر میں بھی گیا ہو مجھے ہلاک ہو نے والے اسلم ڈھولا کے چھوٹے چھوٹے بچے دیکھ کر بڑا اافسوس ہوا ہے بچے اپنے مردہ باپ کی ایک جھلک دیکھنے کے لیے بے تاب ہیں رکن قومی اسمبلی جمشید احمد خان دستی نے کہا کہ لاہور میں کسی کا کوئی کتا بھی مر جائے تو وزیراعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف فوراََ خود پہنچ جاتے ہیں یہاں تو ایک 9بچوں کا باپ پولیس والوں نے آکر بے قصور ہی جعلی پولیس مقابلہ بنا کر ماردیا ہے تخت لاہور والے پنجاب پولیس سے ماہانہ 5کروڑ روپے بھتہ وصول کرتے ہوئے اُنہیں کھلی چھٹی دے رکھی ہے انہوں نے کہا کہ میں تونسہ براج کے علاقہ میں کیا گیا ہوا تھا مجھے جیسے ہی مظاہرین کے احتجاجی دھر نا کی اطلاع ملی میں نے فوری طو ر پر آر پی اوملتان کو فون اور کمشنر ملتان دونوں کو فون کیا لیکن کسی نے بھی فون اُٹھا نے کی زحمت تک نہیں کی اور بڑے آرام کے ساتھ ٹھنڈے کمروں میں آرام کر نے میں مصرو ف تھے یہاں ہزاروں مسافر ، ٹرانسپورٹرز اور مظاہرین گرمی میں تڑپ رہے پولیس نے انسانیت کا خیال رکھنے کی بجائے لاش بھی ورثاء کو دفنانے کے لیے پولیس نے28گھنٹے بعد دی رکن قومی اسمبلی جمشید احمد خان دستی نے کہا کہ ڈی پی او وہاڑی ہلاک ہونے والے محمد اسلم ڈھولا کے ورثاء کی جانب سے دی گئی تحریر ی درخواست پر نامز ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کر نے کا حکم دیں تاکہ اُن کے خلاف کاروائی ہوسکے اس موقع پر چوہدری مبشرحسن کمبوہ ، ڈاکٹر جاوید رانا ، صفدر عباس خان منیس ، محمد سراج بھی موجود تھے ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر