نواز شریف ترکی میں ہوتے تو فوجی بغاوت کامیاب ہو جاتی،کرپشن کا خاتمہ نواز شریف کے احتساب سے مشروط ہے: عمران خان

نواز شریف ترکی میں ہوتے تو فوجی بغاوت کامیاب ہو جاتی،کرپشن کا خاتمہ نواز ...

باغ(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ پاکستان تباہی کی جانب جا رہا ہے ۔ سب سے بڑا مسئلہ کرپشن ہے۔پاکستان کے حکمران اس کے ذمہ دار ہیں۔نواز شریف کے احتساب کے بغیر ملک ترقی نہیں کر سکتا۔ وزیراعظم کرپٹ ہے تو دوسروں کا کیسے احتساب کرے گا۔پاکستان میں کرپشن کا خاتمہ نواز شریف کے احتساب سے مشروط ہے۔اگر ترکی میں اردوان کی جگہ  نواز شریف ہوتے تو فوجی بغاوت کامیاب ہو جاتی۔

باغ میں پی ٹی آئی کے انتخابی جلسے سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ جب مشرف نے پاکستان میں اقتدار سنبھالا تو نواز شریف کی حمایت میں ایک آدمی بھی باہر نہ نکلا اب بھی ایسا ہی ہوگا بلکہ اب تو حالات اس سے بھی برے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ  چور چوروں کا احتساب نہیں کر سکتا۔ نواز شریف سے کرپٹ آدمی ساری زندگی نہیں دیکھا۔انہوں نے کہا کہ وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار کو نیب نے بری کر دیا جس نے حلفیہ بیان دیا تھا کہ میں نواز شریف کیلئے منی لانڈرنگ کرتا تھا۔نواز شریف پر نیب میں 13کیسز ہیں ۔ ان کی کارروائی نہیں چلائی جاتی۔اصل احتساب ہم کریں گے جو مجھ سے شروع ہوگا۔ان کا کہنا تھا کہ پاناما لیکس نے ملک سے باہر نواز فیملی کی اربوں روپے کی جائیداد بے نقاب کر دی۔نواز شریف کو پاکستان کی نہیں بلکہ بھارت میں اپنے کاروبار کی فکر ہے۔اگر ہمیں انصاف نہ ملا تو سڑکوں پر نکلیں گے اور اتنی بڑی تعداد میں نکلیں گے کی ن لیگ کو پتہ چل جائے گا۔عمران خان نے کہا کہ میں مودی سے کہتا ہوں کہ جتنی مرضی فوج کشمیر میں لگا دو تم جیت نہیں سکو گے۔ امریکہ بھی لاکھوں فوجیوں کے باوجود ویتنام اور افغانستان سے بھاگ گیا تھا۔

مزید : قومی /اہم خبریں

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...