وزیر خزانہ کے خلاف احتساب ریفرنس بند کرنے کا اقدام سپریم کورٹ میں چیلنج

وزیر خزانہ کے خلاف احتساب ریفرنس بند کرنے کا اقدام سپریم کورٹ میں چیلنج
وزیر خزانہ کے خلاف احتساب ریفرنس بند کرنے کا اقدام سپریم کورٹ میں چیلنج

لاہور(نامہ نگار خصوصی )نیب میں وزیر خزانہ اسحاق ڈار کے خلاف کرپشن ریفرنسز بند کرنے کا اقدام سپریم کورٹ میں چیلنج کر دیا گیاہے، درخواست میں کہا گیا ہے کہ نیب نے ملی بھگت کر کے اسحاق ڈار کے خلاف ریفرنسز بند کئے ہیں ،سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں یہ درخواست شہری محمود نقوی کی طرف سے دائر کی گئی ہے جس میں الزام عائد کیا گیا ہے کہ نیب نے وزیر خزانہ اسحاق ڈار سمیت اہم سیاسی شخصیات کے خلاف کرپشن ریفرنسز بند کر دیئے ہیں۔

وزیر خزانہ کے خلاف نیب ریفرنسز عدم ثبوتوں کی بنیاد پر ختم کئے گئے ہیں جو کہ حقائق کے منافی اقدام ہے، درخواست میں کہا گیا ہے کہ نیب کئی برسوں سے اسحاق ڈار کے خلاف ناجائز اثاثے بنانے کے کیس کی تحقیقات کر رہا تھا اور اس حوالے سے نیب نے ثبوت بھی اکٹھے کئے لیکن اب اچانک چیئرمین نیب نے ایگزیکٹو بورڈ کے اجلاس میں اسحاق ڈار کے خلاف عدم ثبوت کو جواز بنا کر ریفرنسز ختم کرنے کی منظوری دی ہے، درخواست میں کہا گیا ہے کہ نیب کو متعلقہ عدالت کی منظوری کے بغیر نیب ریفرنسز ختم کرنے کا اختیار نہیںہے، درخواست میں استدعا کی گئی ہے کہ نیب کی طرف سے وزیر خزانہ اسحاق ڈار کے خلاف ریفرنسز ختم کرنے کا اقدام غیرقانونی قرار دیتے ہوئے دوبارہ تحقیقات کا حکم دیا جائے۔

مزید : جرم و انصاف

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...