جما عت اسلا می کے رہنماؤں نے بھی نئی پو لیس یو نیفا رم کی تبدیلی کامطالبہ کردیا

جما عت اسلا می کے رہنماؤں نے بھی نئی پو لیس یو نیفا رم کی تبدیلی کامطالبہ ...

لا ہور(کرا ئم رپورٹر)ملک کی ممتا ز سیا سی و مذہبی جما عت نے بھی نئی پو لیس یو نیفا رم کو سخت تنقید کا نشا نہ بنا یا ہے اور کہا ہے کہ یو نیفا رم کی تبد یلی پولیس کی تو ہین کے مترادف ہے جبکہ پولیس افسرو ں کی وقعت اور احترا م میں کمی واقع ہو گئی ہے۔ پو لیس یو نیفا رم تبد یل کر کے پو لیس فورس کا مورال بھی ڈاؤن کیا گیا ہے ۔ قبل ازیں ریٹا ئر ڈ سینئر پو لیس افسرو ں ،تاجروں، ادا کا رو ں،فنکا رو ں اورسیا سی رہنما ؤں کی جانب سے بھی نئی یو نفا رم کو ناپسند اور غیر معیاری قرار دیکر پہلی وردی کو لانے کا مطالبہ کیا جاچکاہے جبکہ ذرا ئع نے دعو یٰ کیا ہے کہ نئی یو نیفا رم کو تبدیل کرنے کے لیے آئی جی آفس میں اجلاس بھی شروع کردئے گئے ہیں۔جما عت اسلا می کے امیرسنیٹر سراج الحق نے نمائندہ ’’پاکستان ‘‘سے گفتگومیں کہا ہے کہ پولیس افسران کا اعتراض ہے کہ یہ نئی وردی نہ صرف بہت گرم ہے بلکہ گہرا رنگ ہونے کے باعث بدنما بھی لگتی ہے اور پولیس کی نئی وردی راولپنڈی میں تقسیم نہیں ہوسکی لہذانئی وردی کو فوری تبدیل کرکے پہلی وردی کو بحال کرنے کا مطالبہ کیا جا تا ہے۔ جما عت اسلا می کے سیکرٹری جنرل لیا قت بلو چ کا کہنا ہے کہ پرانی وردی پو لیس کی شنا خت تھی اسے فوری بحال کیا جا ئے کیو نکہ نئی وردی سے پو لیس کا رعب ختم ہو گیا ہے ۔میا ں مقصود کا کہنا ہے کہ نئی وردی سے ایسے معلو م ہو تا ہے جیسے یہ پو لیس کے نہیں کسی فیکٹر ی کے ملا زم ہیں اور وہ اسے پہن کر خوش بھی دکھا ئی نہیں دیتے۔ سیا سی و مذ ہبی رہنما حا فظ سلما ن بٹ کا کہنا ہے کہ ا فسران کی آپس کی چپقلش یا سیاسی مداخلت، وجہ جو بھی ہونئی وردی کو تبدیل کر دینا چا ہیے۔سا بق آئی جی پو لیس پنجا ب مشتاق احمد سکھیرا نے پو لیس کا یو نیفارم تبدیل کر کے فو رس کے سا تھ اچھا نہیں کیا ،یہی وجہ ہے کہ مشتا ق سکھیرا کے ریٹائرہو تے ہی پنجاب پو لیس نے وردی کو تبد یل کیے جا نے کے لئے اقداما ت شروع کر دئے ہیں۔اس ضمن میں اب تک آئی جی آفس میں متعدد اجلاس بھی ہو چکے ہیں۔اجلاس کے دوران متعدد افسران نے پہلی وردی کے حق میں ووٹ دیا ہے اور ان کا کہنا ہے کہ وردی کی تبد یلی سے پولیس افسران کارعب ختم ہو کر رہ گیا ہے۔

مزید : صفحہ آخر