گھریلو ناچاقی پر بیوی قتل، کرنٹ لگنے سے بچہ جاں بحق، نوجوان نہر میں ڈوب گیا

گھریلو ناچاقی پر بیوی قتل، کرنٹ لگنے سے بچہ جاں بحق، نوجوان نہر میں ڈوب گیا

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

بوریوالا، میلسی ، کرم پور، خان گڑھ ، رحیم یار خان(نمائندگان) گھریلو ناچاقی پر شوہر نے بیوی کو زہر دیکر قتل کر دیا ، بیوی کو بچانے کی کوشش میں شوہر نہر میں ڈوب کر دم توڑ گیا کرنٹ لگنے سے 7 سالہ بچہ جاؓں بحق خاتون سمیت 2افراد نے خودکشی کرلی اس سلسلہ میں بوریوالا سے تحصیل رپورٹر کیمطابق معصوم شاہ کالونی کے محنت کش ملک اسحاق احمد کی ہمشیرہ ساجدہ بی بی کی شادی چک463ای بی کے شمشاد نامی نوجوان سے ہوئی تھی جس کے بطن سے ایک (بقیہ نمبر49صفحہ12پر )
معصوم بچی بھی پید اہوئی مدعی کے مطابق ملزم شمشاد بدکردار ہے جس کے غیر عورتوں سے مبینہ مراسم تھے اور بیوی اسے منع کرتی رہتی تھی جس بنا پر میاں بیوی میں اکثر لڑائی جھگڑا ہوتا رہتا تھا اور اس نے اپنی بیو ی ساجدہ کو کئی بار مار پیٹ کر گھر سے نکالا تھا گذشتہ روز ڈیڑہ بجے دن شمشاد اپنی بیوی کو نیم بے ہوشی کی حالت میں اپنے سسرال کے دروازے پر پھینک کر فرار ہو گیا شور واویلا پر والدہ اور اہل محلہ اکھٹے ہو گئے اور ساجدہ کو تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال لایا گیا جہاں وہ جانبر نہ ہو سکی پولیس تھانہ صدر نے نعش پوسٹمارٹم کے بعد ورثاء کے حوالے کر دی اور خاوند کے خلاف زیر دفعہ 302ت پ مقدمہ درج کر کے تفتیش شروع کر دی میلسی ، کرم پور سے نمائندہ پاکستان اور نمائندہ خصوصی کیمطابق سرگانہ کے رہائشی ناصر حسین کی بیوی روبینہ مائی سندھنائی لنک کینال (پکی نہر ) کے کنارے کپڑے دھونے میں مصروف تھی کہ اسی دوران پاؤں پھسلنے سے نہر میں جا گری جسے بچانے کے لیے ناصر حسین نے نہر میں چھلانگ لگا دی اور بیوی کو بچاتے ہو ئے خود گہرے پانی میں ڈوب گیا جسے گذشتہ روز ریسکیو1122کی ٹیم نے فدہ لنک کینال میلسی سے مردہ حالت میں نکال کر نعش ورثہ کے حوالے کر دی ۔ خان گڑھ سے نامہ نگار کیمطابق بستی توحید آباد نزد رورل ہیلتھ سنٹر خان گڑھ کے رہائشی رمضان عرف جانو جو کہ گزشتہ دو سال سے نشہ کا عادی تھا اور اکثر اس کا گھر والوں سے جھگڑا رہتا تھا جس نے گزشتہ رات گلے میں پھندہ ڈال کر پنکھے کے ساتھ لٹک کر خود کشی کر لی رمضان چار بچوں کا باپ بھی تھا جبکہ اس کے گھر والوں نے صبح کمرے میں جاکر دیکھا تو وہ پنکھے کے ساتھ لٹک کر مر چکا تھا خود کشی کرنے والے جوان کا والد رورل ہیلتھ سنٹر خان گڑھ میں خاکروب ہے پولیس نے موقع پر پہنچ کر لاش کو قبضہ میں کیا اور قانونی کاوائی کے بعد ورثا کے حوالے کر دی ۔ رحیم یار خان سے بیورونیوز کیمطابق نورے والی کارہائشی سات سالہ کمسن مزمل راشد جو کہ ٹوکہ مشین کے نزدیک کھیل رہاتھا کہ اچانک بجلی کاکرنٹ لگنے کے باعث شدید زخمی ہوکر زمین پر گرگیا۔ ورثاء نے طبی امداد کیلئے شیخ زید ہسپتال منتقل کیاجہاں طبی امداد کے باوجود کمسن مزمل راشد زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گیا جبکہ دیگر متاثرین جن میں چک105پی کی رہائشی8 سالہ سعدیہ بی بی، بستی کمال کا13سالہ علی طورب اور خیر پور کھڈالی کارہائشی18 سالہ زاہد علی شامل ہیں جنہیں ہسپتال میں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔ دریں اثناء میر پورماتھیلو(سندھ) کی رہائشی35سالہ شبانہ بی بی نے آئے روز کے گھریلو جھگڑوں سے دلبرداشتہ ہوکر بھاری مقدار میں کالا پتھر مشروب میں ملا کر پی لیا حالت تشویشناک ہونے پر ورثاء نے طبی امداد کے لئے شیخ زید ہسپتال منتقل کیا جہاں میڈیکل وارڈ میں دو روزتک طبی امداد کے باوجود شبانہ بی بی جانبر نہ ہوپائی اورجسم میں زہر پھیل جانے کے باعث دم توڑگئی جبکہ اقدام خودکشی کرنے والے آٹھ افراد جن میں رکن پور کی15سالہ سائرہ بی بی، بدلی شریف کی 15سالہ تسلیم بی بی، بہادر پور کی28 سالہ پٹھانی مائی، ترنڈہ سوائے خان کا17سالہ ہمیش، چک عباس کا25سالہ محمدکامران، چک137-1Lکا 25سالہ حنیف اللہ، جمالدین والی کا25سالہ کالو اور ڈہرکی(سندھ) کارہائشی 19سالہ راشد علی شامل ہیں۔ ان افراد کی حالت غیر ہونے پرورثاء نے طبی امداد کے لئے رحیم یارخان شیخ زید ہسپتال منتقل کیاجہاں انہیں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔