ملک ریاست مدینہ کی بجائے کو فی نظام، امریکہ کی غلامی کی جانب گامزن: سراج الحق

ملک ریاست مدینہ کی بجائے کو فی نظام، امریکہ کی غلامی کی جانب گامزن: سراج الحق

  

پشاور(آن لائن) امیر جماعت اسلامی پاکستان سینٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ امریکہ آئی ایم ایف اور ورلڈ بینک کے ذریعے عالمی معیشت پر قبضہ کرنا چاہتے ہیں۔انہوں نے عالم اسلام کی قیادت پر بھی قبضہ کررکھا ہے اور پاکستان کے سمندروں، معدنیات اور وسائل پر بھی قابض ہونا چاہتا ہے۔وہ دیر پائیں میں پی ٹی آئی کے سابق امیدوار برائے صوبائی اسمبلی و ممبر ڈسٹرکٹ کونسل ڈاکٹر سربلند خان کا جماعت اسلامی میں شمولیت کے موقع پر ایک عوامی اجتما ع سے خطاب کرر ہے تھے۔انہوں نے کہا کہ ملک ریاست مدینہ کے فلاحی نظام کی بجائے کوفی نظام اور امریکی استعماری غلامی کی طرف گامزن ہیں۔موجودہ حکمرانوں کے پالیسیوں کی وجہ سے ڈالر کے مقابلے میں روپیہ کاغذ کا ایک ٹکڑا بن گیا ہے۔ پی ٹی آئی حکومت کے ہر روز دوسرے روز سے بدتر ہوتا جارہا ہے۔ عوام کی زندگی اجیرن بن چکی ہے۔جماعت اسلامی دوسری سیاسی جماعتوں پی پی پی، پی ٹی آئی، مسلم لیگ کی طرح سیاسی جماعت نہیں ہے جو عوام سے صرف و وٹ، سپورٹ اور نوٹ لیں بلکہ جماعت اسلامی ایک نظریہ اور فکر کا نام ہے اور جو اس قافلے میں شامل ہے خوش قسمت ہوگا۔اپوزیشن جماعتیں عوامی مسائل کے بجائے اپنے مفادات کے لیے لڑ رہے ہیں۔پی ٹی آئی کی حکومت نے پوری دنیا میں پاکستانی پاسپورٹ اور شلوار قمیض کو رسوا کیا اوراداروں کو تباہ کیا۔ حکومت نے ملک میں ہزاروں مدرسوں کے لیے ایک روپیہ نہیں دیا جب کہ مندروں اور گورداروں کے لیے اربوں روپے فنڈز دیے۔ڈاکٹر سربلند خان کو جماعت اسلامی میں خوش آمدید کہتے ہیں۔ اجتماع سے امیر جماعت اسلامی ضلع دیر پائیں و سابق ممبرصوبائی اسمبلی اور دیگر قائدین نے بھی خطاب کیا۔

امریکہ کی غلامی

مزید :

صفحہ آخر -