نوشہرہ، نامعلوم چوروں نے دوسناروں کی دکانوں کا صفایا کردیا

نوشہرہ، نامعلوم چوروں نے دوسناروں کی دکانوں کا صفایا کردیا

  

نوشہرہ (بیورورپورٹ) تھانہ نوشہرہ کینٹ کے قریب صرافہ بازار میں ڈاکہ نامعلوم چوروں نے دوسناروں کی دوکانوں کے تالے توڑ کردونوں دوکانوں سے 28تولہ طلائی زیورات لیکر فرار ہو گئے نوشہرہ کینٹ پولیس نے مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کر دی انجمن تاجران نوشہرہ کینٹ نے ملزمان کی گرفتاری کیلئے تین دن کا الٹی میٹم دے دیا اس سلسلے میں ریحان جیولرز سرافہ بازار نوشہرہ کینٹ کے مالکان کامران نے بتایا کہ میں جمعے کے روز حسب معمول دوکان آیا تو دیکھا کہ میری دوکان کے تالے نامعلوم چورتوڑچکے تھے جب دوکان میں چھان بین کیا تو معلوم ہوا کہ میری دوکان سے 21تولے طلائی زیورات لے جاچکے تھے جبکہ اسی طرح دوسرے سنار اشرف نے بتایا کہ نامعلوم چور میری دوکان سے بھی ٹھیک اسی طرح چوری کرکے 7 تولے طلائی زیورات لیکر فرار ہوگئے ہیں۔متاثرہ سنار کے مطابق کیمرے میں ریکارڈ ہونے والے مناظر سے ثابت ہوتا ہے کہ چور دن کی روشنی میں انتہائی دیدہ دلیری سے وارداتوں کے عادی ہیں۔ عین تھانہ نوشہرہ کینٹ کے قریب واقع صرافہ بازار میں اتنی بڑی واردات کے بعد اہلیان نوشہرہ کینٹ میں خوف و ہراس پھیل گیا ہے اور نوشہرہ کینٹ کے مکین خود کوغیر محفوظ تصور کرنے لگے۔ انجمن تاجران نوشہرہ کینٹ کے جنرل سیکرٹری حاجی شمشاد نے متاثرہ دوکانوں کے دورے کے بعد صرافہ بازار میں احتجاجی مظاہرے اور بعدازاں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ پولیس نے واقعہ کی ایف آئی آر درج کر دی ہے جس پر ہم مشکور ہیں لیکن پولیس کی اصلامتحان اب شروع ہو گئی ہے کیمرے میں ملزمان دیکھائی دے رہے ہیں اگر پولیس نے تین دن میں ملزمان گرفتار نہ کئے تو پھر ہم احتجاج پر مجبور ہو جائیں گے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -