”ایک وقت تھا جب کلبھوشن یادیو کا نام لینے یا نہ لینے پر غداری کے سرٹیفکیٹ جاری ہوتے تھے اور اب۔۔۔“خواجہ آصف نے حکومت کو تنقید کا نشانہ بنا دیا

”ایک وقت تھا جب کلبھوشن یادیو کا نام لینے یا نہ لینے پر غداری کے سرٹیفکیٹ ...
”ایک وقت تھا جب کلبھوشن یادیو کا نام لینے یا نہ لینے پر غداری کے سرٹیفکیٹ جاری ہوتے تھے اور اب۔۔۔“خواجہ آصف نے حکومت کو تنقید کا نشانہ بنا دیا

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )مسلم لیگ ن کے رہنما خواجہ آصف نے کلبھوشن یادیو کے معاملے پر حکومت کو تنقید کا نشانہ بنا ڈالا ۔مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر پر انہوں نے کہا کہ ایک وقت تھاکلبوشن یادیو کا نام لینے یا نہ لینے پر حب الوطنی یا غداری کا سرٹیفیکیٹ جاری ھوتاتھے اب اسکی سہولت کاری کے لیے قانون وضع ھو رہے ھیں. بھارت اورکشمیر مسلمانوں کے لیے مقتل بناہوا ہے اورہم بھارت کے لیے تجارت کھول رہے ہیں۔یہ کیا اور کیوں ہو رہا ہے؟۔اس پر صحافی احمد نورانی نے کہا کہ خواجہ صاحب, کیاآپ واقعی یہ سمجھتے ہیں کہ ٹرمپ کوملنے کے بعد مقبوضہ کشمیر کو مودی کے حوالے کرکے کشمیریوں کو زندگی بھرکے لیے ایک جیل میں بندکروانے اور اب کلبھوشن کے لیے آرڈیننس جاری کروانے کے پیچھے فوج نہیں بلکہ عمران خان ہے؟ واقعی؟ کیا آپ واقعی سمجھتے پاکستان کےخلاف یہ سب کچھ عمران کررہاہے؟

مزید :

قومی -