گنے کی نئی اقسام سے حاصل ہونے والی پیداوار 2000من فی ایکڑ سے بھی تجاوز کر گئی

گنے کی نئی اقسام سے حاصل ہونے والی پیداوار 2000من فی ایکڑ سے بھی تجاوز کر گئی

  



                                فیصل آباد(اے پی پی) ایوب زرعی تحقیقاتی ادارہ فیصل آباد کی تیار کردہ گنے کی نئی اقسام سے حاصل ہونے والی پیداوار 2000من فی ایکڑ سے بھی تجاوز کر گئی ہے ۔ ڈائریکٹر شوگر کین ریسرچ انسٹیٹیو ٹ نے بتایا کہ اگر ان اقسام کی کاشت جدید طریقوں سے کی جائے اور کاشتکاروں کو پیداواری ٹیکنالوجی کی جانب راغب کرلیاجائے تو ملک میں گنے کی پیداوار میں اس سے بھی کئی گنا زیادہ اضافہ ممکن ہے جس سے جہاں ملکی سطح پر چینی کی ضروریات بآسانی پوری ہو سکیں گی وہیں اضافی چینی برآمد کرکے قیمتی زرمبادلہ بھی حاصل کیاجاسکے گا۔ انہوں نے کہاکہ ادارہ میںگنے کی نئی اقسام پر مزید تحقیق جاری ہے، پاکستان دنیا کا پہلا ملک ہے جس میں چھو ٹے قد کی گندم کی نئی اقسام متعارف کرائی گئی ہیں جن کی کاشت سے نہ صرف پاکستان بلکہ دنیا بھر میں سبز انقلاب برپا ہوا ہے۔

مزید : کامرس


loading...