سپریم کورٹ نے جعلی ویزوں کے کاروبار میں ملوث خاتون کی درخواست ضمانت مستردکر دی

سپریم کورٹ نے جعلی ویزوں کے کاروبار میں ملوث خاتون کی درخواست ضمانت مستردکر ...

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی)سپریم کورٹ نے بیرون ملک بھجوانے کا جھانسہ دے کر شہریوں سے کروڑوں روپے کا فراڈ کرنے والی خاتون کی درخواست ضمانت مسترد کردی۔جسٹس اعجاز احمد چودھری کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے لبنیٰ چوہان عرف طوبیٰ کی بعد از گرفتاری ضمانت کی درخواست پر سماعت کی، درخواست گزار کے وکیل نے بنچ کو بتایا کہ اس کے خلاف کوئی گواہ موجود نہیں، ایف آئی اے نے جھوٹی درخواستوں پر کارروائی کرتے ہوئے خاتون کو ڈیڑھ برس سے گرفتار کر رکھا ہے، ایف آئی اے کے انسپکٹر محمد حنیف نے بنچ کے روبرو رپورٹ پیش کی، ڈپٹی اٹارنی جنرل میاں عرفان نے بنچ کو بتایا کہ خاتون لاہور میں ایڈریس اور شناخت بدل کر جعلی ویزوں کا کام کرتی تھی، خاتون 12مقدمات میں نامزد ملزمہ ہے جن میں خاتون پر شہریوں سے لاکھوں روپے بٹورنے کا الزام ہے، انہوں نے بتایا کہ ایف آئی اے کی انکوائری میں خاتون نے ایک سو پچیس شہریوں کے ساتھ کروڑوں روپے کا فراڈ کیا ہے، اگر خاتون کو رہا کر دیا گیا تو وہ دوبارہ شہریوں کے ساتھ فراڈ کریگی، سپریم کورٹ کے بنچ نے دونوں فریقین کے دلائل سننے کے بعد خاتون کی درخواست ضمانت مسترد کر دی۔

ضمانت مسترد

مزید :

صفحہ آخر -