جعلی دستخطوں کے ذریعے ناقص مال فراہم کرنیوالے افسران کےخلاف کارروائی نہ ہو سکی

جعلی دستخطوں کے ذریعے ناقص مال فراہم کرنیوالے افسران کےخلاف کارروائی نہ ہو ...

  

لاہور(کامرس رپورٹر)جعلی دستخطوں کے ذریعے 12 گرڈ سٹیشنوں پر ناقص مال فراہم کرنیوالے افسران کے خلاف تاحال کارروائی عمل میں نہیں آسکی، ان افسران نے این ٹی ڈی سی کے 12 گرڈ سٹیشنز پر عالمی معیار کے برعکس 300 فیصد ناقص میٹریل کے 92 پینلزلگوا کر سرکاری خزانے کو 12 کروڑ روپے کا نقصان پہنچایا تھا، این ٹی ڈی سی کی کوالٹی ٹیم نے ناقص میٹریل پر کراچی کی کمپنی کو دیا گیا ٹینڈر مسترد کرنے کی سفارش کی تھی جبکہ این ٹی ڈی سی ڈیزائن کے ڈائریکٹر نے بوگس دستخط کے ساتھ انسپکشن سرٹیفکیٹ جاری کر دیا اور مال منظور ہوتے ہی پینلز لگوا دیئے گئے۔میٹریل منظور کرنے کی مجاز اتھارٹی کے انکار کے باوجود این ٹی ڈی سی کے افسران نے انسپکشن کمیٹی پر دباﺅ ڈال کر کمیٹی کے رکن فرحان احمد (اسسٹنٹ منیجر ڈیزائن) کی جگہ غیر قانونی طور پر اپنے دستخط کر کے انسپکشن سرٹیفکیٹ جاری کر دیا۔وزارت پانی و بجلی میں ان افسران کے گہرے تعلقات کے باعث تاحال اس حوالے سے کوئی کارروائی عمل میں نہیں لائی جا سکی ۔ادارے کے ایماندار افسران نے وفاقی سیکرٹری پانی و بجلی نرگس سیٹھی سے معاملے کا نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔

جعلی دستخط

مزید :

صفحہ آخر -