مذہب کے نام پر دہشتگردی اسلام کے خلاف ہے،مولانا عاصم مخدوم

مذہب کے نام پر دہشتگردی اسلام کے خلاف ہے،مولانا عاصم مخدوم

  

لاہور( سٹی رپورٹر)مذہب یا مسلک کے نام پر فرقہ واریت اور دہشت گردی خلاف اسلام اور خلاف قانون ہے،کل مسالک علماءبورڈ پاک فوج کی قربانیاں کبھی رائیگاں نہیں جائیں گے،انتہاءپسندی،د ہشت گردی،فرقہ وارانہ تشدد کے خلاف ہر سطح پر جدوجہد جاری رکھیں گے،مولانامحمدعاصم مخدوم۔کل مسالک علماءبورڈ کا اہم اجلاس جامع مسجد کبری نیوسمن آبادلاہورمیں ہوا،اجلاس میں ملک میں فرقہ واریت کے خاتمہ اور مذہبی ہم آہنگی کے لئے میں جولائی میں بین المسالک اتحاد امت کانفرنس منعقدکرنے کا فیصلہ کیاگیاہے، مولانامحمدعاصم مخدوم،علامہ مفتی سیدعاشق حسین شاہ ، مولاناایوب خان ثاقب،علامہ حافظ کاظم رضاءنقوی، مولاناشکیل الرحمن ناصر، علامہ وقار الحسنین نقوی ، حافظ شعیب الرحمن،مولانا سلمان شاکر،مولاناعبدالرب امجد ، مولانامحمداسلم صدیقی،مولاناافضل حیدری، ڈاکٹر بدر منیر مجددی،علامہ شبیر انجم،قاری انعام الرحیم ، مولانا اصغرچشتی،ڈاکٹر امجد حسین چشتی،پرویزاکبر ساقی ، ڈاکٹر عبدالغفار رندھاوا،مولانایونس ریحان ودیگر نے وزیرستان میں پاک فوج پر ہونے والے حملہ کی شدید مذمت کی۔

،آج پاک فوج کی بدولت ملک میں امن ہے اور دہشت گردوں کا قلع قمع ہوا ہے،کل مسالک علماءبورڈ کے چیئرمین مولانامحمدعاصم مخدوم نے میڈیا سے گفتگوکرتے ہوئے کہ انتہاءپسندی،د ہشت گردی،فرقہ وارانہ تشدد کے خلاف ہر سطح پر جدوجہد جاری رکھیں گے، فرقہ وارانہ فسادات نے پاکستان کی بنیادوں کو کھوکھلاکرکے رکھ دیاہے، کل مسالک علماءبورڈ پاکستان کا واحد کل مسالک پلیٹ فارم ہے جو بلارنگ و نسل و مکتبہ فکر انتہاپسندی کے خلاف سرگرم عمل ہے،مذہب یا مسلک کے نام پر فرقہ واریت اور دہشت گردی خلاف اسلام اور خلاف قانون ہے،کسی بھی مسلمان فرقے کی تکفیر جائز نہیں۔آئین پاکستان میں مسلمان کی تعریف تمام اکابر کے درمیان متفق علیہ ہے،مقدس شخصیات میں کسی کی توہین یا تحقیر کرنا جرم ہے،حکومت ایسے لوگوں کے خلاف کاروائی کرئے،اجلاس میں سابق سنیٹر علامہ عباس کمیلی کے انتقال پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا گیا،اور پاک فوج کے شہدا کے درجات کی بلندی کے لئے دعا مغفرت کی گئی

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -