حکومت معاشی بحران سے نمٹنے کیلئے بھرپور اقدامات کررہی ہے‘ شاہینہ نجیب کھوسہ

  حکومت معاشی بحران سے نمٹنے کیلئے بھرپور اقدامات کررہی ہے‘ شاہینہ نجیب ...

  

ڈیرہ غازی خان (بیورورپورٹ) پاکستان تحریک انصاف کی ایم پی اے ڈاکٹر شاہینہ نجیب کھوسہ نے کہا ہے کہ موجودہ ملکی معاشی صورتحال میں اس سے زیادہ بہتر بجٹ پیش نہیں کیا جا سکتا تھا جو پی ٹی آئی کی حکومت نے مرکز اور پنجاب میں پیش کیا انہوں نے کہا کہ اس تلخ حقیقت سے انکار نہیں کیا جا سکتا کہ غلط معاشی پالیسیوں کا نتیجہ مہنگائی کی صورت میں عوام کو پریشان کر رہا ہے حکمرانوں کو نہ صرف اس (بقیہ نمبر29صفحہ12پر)

پریشانی کا احساس ہے بلکہ حکمران دن رات اس پریشانی کو کم کرنے میں مصروف ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ قوموں کی زندگیوں میں مشکل حالات آتے ہیں وہ نہ صرف مل جل کر بہادر ی سے انکا مقابلہ کرتے ہیں بلکہ فہم و تدبر اور بہترین حکمت عملی سے ان حالات سے چھٹکارہ بھی حاصل کر تی ہیں ڈاکٹر شاہینہ نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان اور وزیر اعلیٰ عثمان بزدار کا ویژن اس معاملہ میں بہت واضح ہے کہ غریب اور محروم طبقات کو خصوصی پروگرامز”احساس، مساوات، ہم قدم کے ذریعے خصوصی ریلیف دیا جائے قربانی اور ایثار کے سفر میں سب سے پہلے حکمران طبقات قربانی اور ایثار کریں نیز تمام وسائل کو بروئے کار لاکر روزگار میں اضافہ غربت مہنگائی میں کمی، صحت و تعلیم کی سہولتوں میں بہتری اور سماجی بہبود کو جامع، موثر اور مربوط پروگرام وضع کیا جائے حکومتی وعدہ ہے سب سے زیادہ غریب امداد اور تعاون میں سب پہلے، اپنے وعدوں اور پروگرام پر عمل درآمد کے لیے ہمیں عوام اور لوکل نمائندوں کا پر خلوص تعاون برقرار ہے تاکہ غریب اور محروم کی درست نشاندہی ہوسکے میٹنگ میں موجود افراد نے ڈی جی خان میں روزگار کے مواقع بڑھانے،غربت کم کرنے صفائی اور سیوریج کے حوالے سے اپنی تجاویز دیں، ممبران نے ٹنکوکریٹس ڈی جی خان کی مستقل باڈی بنانے اور اسکی ریگولر میٹنگ بلوانے پر اتفاق کیا اس موقع پر ڈی جی خان انویسٹمنٹ بورڈ بنانے کی بھی منظوری دی گئی میٹنگ میں ڈاکٹر راشد قریشی، ڈاکٹر شکیل الرحمن، رقیہ رمضان ایڈووکیٹ، خادم ڈھولن، فضل حسین سولنگی، رحمت کھوسہ، ممتاز سولنگی، ثناء اللہ کھوسہ و دیگر نے شرکت کی۔ ڈی جی خان کے جو ٹکنوکریٹس اس باڈی کا حصہ بن کر شہر اور شہر والوں کی خدمت کرنا چاہتے ہیں وہ ڈاکٹر شاہینہ سے رابطہ کر سکتے ہیں۔

شاہینہ نجیب کھوسہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -