صوبے کے مختلف اضلاع میں پلاسٹک شاپنگ بیگز کیخلاف کریک ڈاﺅن ، بڑ ی مقدارپر قبضہ

صوبے کے مختلف اضلاع میں پلاسٹک شاپنگ بیگز کیخلاف کریک ڈاﺅن ، بڑ ی مقدارپر ...

  

پشاور ،اضلاع ( سٹی رپورٹر ،نمائندگان پاکستان)ڈپٹی کمشنر شفیع اللہ خان نے اے سی ڈگر لطیف الرحمان کے ھمراہ مرکزی بازار سواڑی میں بڑی کاروائی کرتے ہوئے پانچ ڈسٹری بیوٹرز سے اسی کلو گرام سے بھی زیادہ پولیتین بیگز قبضہ میں لیے ہیں اور پولیس کو ملزمان کے خلاف کاروائی کی ھدایات کی ہیں۔کاروائی کے دوران سٹی پولیس اسٹیشن کی بھاری نفری بھی موقع پر موجود رتھی۔دکانداروں نے فوری طور پر بازار یونین سے رابطہ کیا اور ال بونیر ٹریڈرز فیڈریشن کے چیئر مین حاجی بشیر احمد بھی موقع پر پہنچ گئے تاھم انتظامیہ نے کسی دباو کو خاطر میں نہ لاتے ہوئے کاروائی مکمل کی اور خبردار کیا ہے کہ پولیتین بیگز کے خلاف اپریشن روزانہ کی بنیادوں پر جاری رکھا جائے گا اور ائندہ مذید سخت کاروائی عمل میں لائی جائے گی ۔میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے ڈپٹی کمشنر نے دو ٹوک الفاظ میں کہا ہے کہ عوام کے صحت کے لیے مضر پولیتین بیگزرکھنے پر سخت کاروائی کی جائے گی اور دعویٰ کیا ہے کہ بائیوڈیگریبل بیگز ہر بازار میں قائیم دکان سے حاصل کیا جاسکتا ہے ۔بقول انکے پولیتین بیگز ہر لحاظ سے مضر ہے جس سے ایک طرف انسانی صحت کو خطرات لاحق ہیں تو ماحول بھی بری طرح متاثر ہوتا ہے اور زرخیز زمین کو بنجر اور زیر زمین پانی کے زخائر پر منفی اثرات چھوڑ جاتے ہیں وہاں ندی نالوں کو بند کرکے نکاسی اب میں رکاوٹ بنتا ہے ۔اسلئے حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ اس مضر صحت اور مضر ماحول پولیتین بیگز کو ہر صورت ختم کیا جائے گا ۔اور ضلعی انتظامیہ بونیر بازار بازار اس کے خلاف کاروائی میں مصرو ف ہے اور ساتھ ساتھ دکانداروں اور عوام کو پیعام بھی دیا جاتا ہے کہ وہ پولیتین بیگز کے فروخت اور استعمال سے اجتناب کرے اور اپنے لیے اور نئی نسل کے لیے انسان دوست اور صحت مند ماحول فراھم کرنے میں حکومت کے ساتھ بھر پور تعاون کرے۔اس موقع پر ال ٹریڈرز فیڈریشن کے چیئر مین حاجی بشیر احمد نے میڈیا کو بتایا ہے کہ دکانداران حکومتی پالیسی پر عمل کرنے کے پابند ہیں ۔تاھم انتظامیہ سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ نرمی کا مظاہر ہ کرے اور برامدشدہ پولیتین بیگز بیشک بحق سرکار ضبط کرے لیکن دکانداروں کے ساتھ نرمی کا مظاہر ہ کرتے ہوئے ایک موقع دیں اور ائندہ کے لیے سخت سے سخت کاروائی کرے٭ حکومت خیبرپختونخوا کے احکاما ت کی روشنی میں ضلعی انتظامیہ کوہاٹ نے ڈپٹی کمشنر کوہاٹ مطیع اللہ خان کی ہدایت پرپورے ضلع میںپولی تھین بیگز کے خلاف کریک ڈاو¿ن تیز کردیاہے اورگزشتہ 3 دنوںکے دوران اب تک 3 ہزار کلوگرام سے زیاد ہ پولی تھین بیگز بحق سرکار ضبط کیے جاچکے ہیںاوردُکانداروں کو تنبیہ کی گئی ہے کہ وہ آئندہ پولی تھین کی بجائے بائیوڈیگریڈایبل بیگز کا استعمال کریں ۔تفصیلات کے مطابق اسسٹنٹ کمشنر کوہاٹ فرقان اشرف نے کنگ گیٹ ،پولیٹیکل بازار ،شہباز گل منڈی اور تحصیل بازارمیں کئی گوداموںاوردُکانوں پرچھاپے مارے اورموقع پر8 سو کلوگرام پولی تھین بیگ ضبط کرلئے ۔اسی طرح اسسٹنٹ کمشنر لاچی محمد علی شاہ نے بھی لاچی بازارمیں چھاپوںکے دوران 5 سو کلوگرام سے زیادہ پولی تھین بیگز ضبط کرلئے ۔دریں اثناءایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنرزصاحبزادہ سمیع اللہ ،طاہر علی اورمراد احمد ہوتی نے بھی پولی تھین بیگز کے خلاف کریک ڈاو¿ن میں 15 سو کلوگرام سے زیادہ پولی تھین بیگز ضبط کرلئے ہیں۔ڈپٹی کمشنر کوہاٹ کا کہنا تھا کہ حکومت خیبرپختونخوا کا پولی تھین بیگز پر پابندی سے متعلق حکم پر من وعن عمل درآمد کیاجائے گا اورکسی کو بھی غیرقانونی کاروبارکرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ ضلعی اتنظامیہ نے دُکانداروں سے آئندہ کے لئے پولی تھین بیگ استعمال نہ کرنے کے اقرار نامے بھی لئے٭جندول اسسٹنٹ کمشنر جندول نے پلاسٹک شپنگ بیگ کے خلاف کریک ڈون کئی دوکاندروں سمیت ریڑی باندوں سے پلاسٹک شپنگ بیگ اپنے قبضے میں لے لیا مزید کاروئی بھی ہونگے اے سی واجد علی۔ جس پر جندول تحصیل ثمرباغ کے ریڑی باندوں ،چھوٹے موٹے کاروبار سے وبستہ تمام تاجران براہم اسسٹنٹ کمشنر کا کاروئی ظلم قرادیاانہونے میڈیا کو بتایا کہ صوبائی حکومت کے نااہلی کے وجہ سے علاقائی لوگ قسم ماقسم طریقوں سے تنگ کیا جارہا ہے انہونے کہا کہ تبدیلی کے دعویداروں کو یہ بھی معلوم نہیں ہے کہ بازاروں سمیت گاوں اور محلے کی صفائی ٹی ایم او کے ضمداری ہے صوبائی حکومت نے پلاسٹک شپنگ بیگ پر پابندی عائد کرسے لاکھوں لوگوں کے روزگار ختم ہوجانے کا خطرہ پیدا کیاہے انہونے مزید کہا کہ پلاسٹک شپنگ بیگ ختم ہونے سے صوبائی حکومت نے اپنا نااہلی کا خودی سبوط دے دیا ہے انہونے مزید کہا کہ صوبائی حکومت نے ٹی ایم اے میں سینکڑوں ملازمین رکھے ہے جو ایک مہنے میں کروڑوں روپے لیتے ہے اسکا کیا کام ہوگا بعد میں جب پلاسٹک شپنگ بیگ ختم ہوجائے گاانہونے صوبائی حکومت سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ صوبائی حکومت پہلے عوام کو فری میں شپنگ بیگ فراہم کریں جیسا سبزی فروش اور دیگر دوکاندان سودسودہ فراہم کرنے کے وقت دیتے ہے تو بعد میں کاروئی کریں جبکے اس سلسلے میں اسسٹنٹ کمشنر واجد علی نے میڈیا کو بتایا کہ صوبائی حکومت سمیت ضلعی انتظامیہ کے احکامات کے روشنی میں کاروئی عمل میں لائے گئی ہے انہونے مزید کہا کہ تمام دوکانداروں سمیت پلاسٹک شپنگ بیگ کے روزگار کرنے ولا کو چائیے کہ صوبائی حکومت کے پلاسٹک شپنگ بیگ پر پابندی کے فیصلے پر عمل کریں ورنا ان کے خلاف قانونی کاروئی عمل میں لائی جائے گی٭تیمرگرہ بازار میں ضلعی انتظا میہ کی جانب پولی تھین بےگز کے خلاف کاراوائی ،350کلوگرام پلاسٹک شاپنگ بیگز کوقبضہ میں لے لیا گیا ،صو با ئی حکومت کی پالیسی کے مطابق ڈپٹی کمشنر دیرلویر شوکت علی یوسف ز ئی کی خصوصی ہدایات پر تحصیل میونسپل آفیسر تیمرگرہ پرویز اختر اور اے سی تیمرگرہ شاہ جمعیل کے زیر نگرانی معاینہ ٹیم نے پلاسٹک بیگز کے خلاف جاری مہم کے سلسلے میں ضلعی ہیڈکواٹر تیمرگرہ کا اچانک دورہ کیا ،اس دوران مختلف شاپنگ مالز ،دکانوں ،فروٹ فروشوں سے 350کلوگرام کے لگ بھگ پلاسٹک شاپنگ قبضہ میں لیا گیا ،اے سی شاہ جمعیل خان اور ٹی ایم او پرویز اختر نے تاجروں پر واضح کیا کہ وہ پلاسٹک شاپنگ بیگز کی بجا ئے کپڑے کے تھیلوں میں سودا کی فروخت یقینی بنا ئے تاکہ ماحول کی صفائی کی یقینی بنایا جاسکے ٭ڈپٹی کمشنر ڈیرہ اسماعیل خان محمد عمیر خان کی ہدایت پر اسسٹنٹ کمشنر ڈیرہ عون حیدر گوندل نے غیر معیاری اور حکومت کی طرف سے بین شدہ پلاسٹک بیگ کے خلاف شہر کے مختلف دکانوں پر کریک ڈاﺅن کیا دیگر حکام کے ہمراہ انہوں نے مختلف چھوٹی بڑی دکانوں پر چھاپوں کے دوران انہوں نے تین سو بیس کلو گرام نان بائیو ڈی گریڈ ایبل شاپرز کو اپنے قبضے میں لے لیا اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حکومت کی طرف سے نان بائیو ڈی گریڈایبل بیگز پر پابندی لگا دی گئی ہے اگرچہ متعدد دکاندار یہ بیگز نہیں استعمال کر رہے ہیں مگر جن دکان داروں کے پاس سے یہ بیگ برآمد ہوں گے مستقبل میں ان کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔

مزید :

صفحہ اول -