امریکہ آنے والی لڑکی کا کسٹمز اہلکاروں نے موبائل فون چیک کیا تو اس میں سے کیا شرمناک چیز نکلی کہ 10 سال داخلے پر پابندی لگادی، کوئی سوچ نہیں سکتا تھا کہ یہ بھی چیک کیا جاسکتا ہے

امریکہ آنے والی لڑکی کا کسٹمز اہلکاروں نے موبائل فون چیک کیا تو اس میں سے کیا ...
امریکہ آنے والی لڑکی کا کسٹمز اہلکاروں نے موبائل فون چیک کیا تو اس میں سے کیا شرمناک چیز نکلی کہ 10 سال داخلے پر پابندی لگادی، کوئی سوچ نہیں سکتا تھا کہ یہ بھی چیک کیا جاسکتا ہے

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) ایک برطانوی لڑکی اپنی سہیلی کے ہمراہ سیاحت کے لیے امریکہ پہنچی لیکن وہاں ایئرپورٹ پر ہی اس کے فون میں ایک ایسا میسج کسٹمز اہلکاروں نے دیکھ لیا کہ اسے حراست میں لے لیا گیا۔ میل آن لائن کے مطابق 28سالہ ازابیلا بریزیئر جونز نامی یہ لڑکی اپنی 26سالہ دوست اولیویا کیورا کے ہمراہ لاس اینجلس ایئرپورٹ پر اتری تھی۔ جہاں کسٹمز حکام نے ازابیلا کا فون چیک کیا تو ایک میسج میں کوکین کے بارے میں لکھا ہوا تھا۔ اس پر کسٹمز حکام انہیں الگ لے گئے اور تفتیش شروع کر دی۔

کسٹمز آفیسرز نے ازابیلا سے پوچھا کہ کیا اس نے کبھی کوکین استعمال کی ہے، تو اس نے اعتراف کر لیا کہ 2017ءمیں ایک بار اس نے تھوڑی سی کوکین استعمال کی تھی۔ اس پر اسے فوری طور پر حراست میں لے کر حوالات میں بند کر دیا گیا اور اگلے روز اسے نہ صرف واپس برطانیہ ڈی پورٹ کر دیا گیا بلکہ 10سال تک اس کے امریکہ میں داخلے پر بھی پابندی لگا دی گئی۔ ازابیلا، جو پیشے کے اعتبار سے اداکارہ ہے، کا کہنا تھا کہ ”مجھے ایک سیل میں بند کیا گیا تھاجہاں 4خواتین اور بھی موجود تھیں۔ انہوں نے میرے ساتھ جو سلوک کیا وہ کسی طور ٹارچر سے کم نہیں تھا۔ انہوں نے میرے ساتھ یہ سلوک اس لیے کیا کہ میں پوش، سفید فام لڑکی تھی۔ انہوں میرے ساتھ یہ رویہ اختیار کرکے اپنی نسل پرستانہ سوچ کا ثبوت دیا ہے۔“

مزید :

بین الاقوامی -