11 سالہ بچہ جو اپنے باپ کی جان بچانے کے لئے دن میں 5 مرتبہ کھانا کھاتا ہے

11 سالہ بچہ جو اپنے باپ کی جان بچانے کے لئے دن میں 5 مرتبہ کھانا کھاتا ہے
11 سالہ بچہ جو اپنے باپ کی جان بچانے کے لئے دن میں 5 مرتبہ کھانا کھاتا ہے

  

بیجنگ(مانیٹرنگ ڈیسک) چین میں ایک 11سالہ بچہ اپنے باپ کی جان بچانے کے لیے دن میں 5مرتبہ کھانا کھاتا ہے، یہ بات سن کر آپ کو عجیب لگے گا لیکن یہ واقعی حقیقت ہے۔ اس بچے کا نام لو ژی کوان ہے جس کے باپ کو لیوکائمیا کا مرض لاحق ہے اور اسے بون میرو ٹرانسپلانٹ کی ضرورت ہے۔ ٹرانسپلانٹ کے لیے بون میرو اسے کسی اور نے نہیں بلکہ لوژی نے ہی دینا ہے لیکن اس کا وزن بہت کم ہے۔

ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ جب تک لوژی کا وزن ایک خاص حد تک نہیں بڑھ جاتا اس کا بون میرو نہیں نکالا جا سکتا اور اس کے باپ کے پاس بھی بہت کم وقت ہے۔ چنانچہ لوژی اپنے باپ کی جان بچانے کے لیے تیزی کے ساتھ اپنا وقت بڑھانا چاہتا ہے اور دن میں پانچ بار کھانا کھاتا ہے۔

ڈاکٹروں کے مطابق بون میرو دینے کے لیے لوژی کا وزن کم از کم 45کلوگرام ہونا چاہیے۔ اگر 50کلوگرام ہو جائے تو یہ آئیڈیل وزن ہو گا لیکن لوژی کا وزن صرف30کلوگرام تھا۔ جب سے اس نے 5وقت کھانا شروع کیا ہے اس کا وزن تیزی سے بڑھ رہا ہے اور اب 43کلوگرام تک پہنچ چکا ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -